بونی میں جلسہ عام کی منسوخی سے پی ٹی آئی کارکنان میں مایوسی اور بے چینی پھیل گئی ہے،قائدین پی ٹی آئی ضلع چترال – Chitral Express

Premier Chitrali Woolen Products

بونی میں جلسہ عام کی منسوخی سے پی ٹی آئی کارکنان میں مایوسی اور بے چینی پھیل گئی ہے،قائدین پی ٹی آئی ضلع چترال

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) پاکستان تحریک انصاف کے سب ڈویژن مستوج کی قیادت اور ورکروں نے 7نومبر کو بونی میں بھی جلسہ عام منعقد کرنے سے متعلق وزیر اعلیٰ پرویزخٹک سے خصوصی ملاقات کرنے کے لئے پی ٹی آئی رہنماؤں رحمت غازی خان ، شہزادہ سکندر الملک اور عبداللطیف پر مشتمل ایک وفد بھیجنے کا فیصلہ کردیا۔ اتوار کے روز بونی میں ان تینوں رہنماؤں رحمت غازی خان ، شہزادہ سکندر الملک اور عبداللطیف کی موجودگی میں مستوج سب ڈویژن سے تعلق رکھنے والے سینکڑوں سینئر ورکروں کا ایک ہنگامی اجلاس منعقد ہوا جس میں اس بات پر تشویش کا اظہار کیا گیا کہ اگلے ماہ کی سات تاریخ کو بونی کے مقام پرقائد تحریک انصاف عمران خان اور وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک کے جلسہ عام کو منسوخ کرکے صرف چترال شہر میں پولو گراونڈ کے مقام پر جلسہ عام رکھا گیا ہے ۔ پارٹی کارکنوں کا کہنا تھا کہ مستوج سب ڈویژن کے عوام اپنے قائدین کا بے چینی سے انتظار کررہے ہیں اور ان کا فقید المثال استقبال کی تیاریاں پہلے سے شروع کردی ہیں اور اب یہاں دورہ اور جلسہ عام کی منسوخی سے ان میں مایوسی اور بے چینی پھیل گئی ہے۔ بعدازاں ممبر ڈسٹرکٹ کونسل رہنما پی ٹی آئی رحمت غازی خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اس اُمید کا اظہار کیا کہ پارٹی کی اعلیٰ قیادت اپنے اس دور افتادہ اور پسماندہ علاقے کے پرخلوص کارکنوں کے درخواست قبول کرتے ہوئے بونی میں بھی جلسہ عام کی اجازت دیں گے ۔ ان کاکہنا تھا کہ اسی طرح ہم اس علاقے میں اپنی سیاسی قوت کا بھرپور مظاہرہ کریں گے کہ دوسری پارٹیوں کے رہنماوں نے جلسے کوکامیاب بنانے کی عہدکی ہے کہ انہوں نے اپرچترال کی دیرنیہ مطالبہ کومنظورکرکے یہاں کے عوام دل جیت لیاہے ۔اس موقع پر پاکستان پیپلزپارٹی اوی کے چیئرمین وکونسلرعلی رحمت شاہ اوریوتھ کونسلراوی خداکریم نے پی پی پی کوخیربادکرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کااعلان کیا۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
دوسروں کے ساتھ اشتراک کریں

یہ خبر بھی پڑھیں

دھڑکنوں کی زبان …. شاکرین استاد

’’شاکرین استاد پنشن پہ گیا ‘‘یہ ایک ایسا جملہ ہے جس پہ کوئی اعتبار نہیں ...


دنیا بھر سے