اظہار تعزیت  – Chitral Express

Premier Chitrali Woolen Products

اظہار تعزیت 

میرے ہم مشرب ہم رکاب رفیقِ کار عزت مند شاہ کی اس جہان فانی سے کوچ کر جانے کی خبر سن کر دلی رنج ہوا ۔ ہماری دوستی اَٹھاؤن سالوں پر محیط ہے ۔ ہم نے سن ساٹھ کی دہائی میں پشاور سے زرعی ترقی کی پیشہ وارانہ تعلیم کا آغاز کیا اور زراعت کے شعبے سے منسلک ہو کر علاقے کی خد مت کرتے رہے ۔ سرکار سے سبددوش ہونے کے بعد اے کے آر ایس پی میں ہم دونوں نے کم و بیش ایک عشرے تک ایک ساتھ کام کیا ۔ آپ کا نام آپ کے کام اور شخصیت پر خشبو اور پھول کی نسبت سے صادق آتا ہے ۔ دوران ملازمت ہمیں ایک دوسرے کو قریب سے دیکھنے ، پرکھنے اور جانچنے کا موقعہ ملا ۔میں نے مرحوم کو ہر عمل اور ہر معاملے میں ایک سچا مسلما ن اور فرشتہ خصلت انسان پایا ۔ آپ اُن پیشہ وروں میں سے ایک تھے جو پیشے کو عبادت سمجھ کر کرتے ہیں ۔ آپ دوران ملازمت اپنے ہم منصب اور ماتحتوں کی، بلا تفریق رنگ ونسل ، مذہب و مسلک اور منصب و عہدہ عزت کرتے رہے اور خود عزت کماتے رہے ۔
جسمانی طور پر ہمارے درمیاں آپ کا عدم وجود ایک طویل اور پر اسرار خلا ہے جسے پُر کرنے اور عزت مند شاہ جیسے انسان دوبارہ پیدا کرنے کے لئے زمانے کو قرنوں کا انتظار کرنا پڑے گا ۔ عزت مند شاہ کی جدائی کا غم صرف اُن کے خاندان اور دوستوں تک محدود نہیں بلکہ یہ خبر سن کر تمام چترال غمزدہ اور اشک بار ہے ۔ میری دعا ہے کہ اللہ تبارک وتعالی مرحوم کو جنت فردوس میں جگہ عطا فرمائے اور ہم سب پسماندگان اور لواحقین کو اس اندوہناک آزمائش کو صبر و تحمل سے برداشت کرنے کی توفیق دے ۔ اس الم ناک واقعے کے رونما ہونے پر جو دکھ اور درد آپ( مرحوم) کے فرزند اور میرے برخوردار ، ذولفقار علی شاہ ، افتخار علی شاہ اور امتیاز علی شاہ کو ہو اہے ، میں اس دکھ میں برابر کا شریک ہیں ۔ رب کائینات آپ کو اور ہم سب کو صبر کی توفیق دے ۔

منجانب : شمس یار خان بونی ، حال نیویارک

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
دوسروں کے ساتھ اشتراک کریں

یہ خبر بھی پڑھیں

شندور میں سہ روزہ جشن شندور شروع پہلے دن کھیلے گئے تینوں میچوں میں چترال کی ٹیموں نے گلگت بلتستان کی ٹیموں کو شکست سے دوچارکیا

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) دنیا کی بلندترین پولو گراونڈ شندور میں سہ روزہ جشن شندور ...


دنیا بھر سے

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔