جشن آزادی کے موقع پر مردان شہر کو دلہن کی طرح سجایا جائے گا۔ ضلع ناظم اسد علی – Chitral Express

Premier Chitrali Woolen Products

جشن آزادی کے موقع پر مردان شہر کو دلہن کی طرح سجایا جائے گا۔ ضلع ناظم اسد علی

مردان( چترال ایکسپریس)قائمقام ضلع ناظم اسد علی نے کہاہے کہ جشن آزادی کے موقع پر مردان شہر کو دلہن کی طرح سجایا جائے گا اور سرکاری عماراتوں اور تجارتی مراکز برقی قمقوں سے روشن کیا جائیگا جبکہ اس دن کو پودے لگا کر وطن سے محبت کا اظہار کیا جائے گا۔ زندہ قومیں آزادی کے دن کو بھر پور طریقے سے مناتی ہے۔یہ دن ہمیں اپنے اسلاف کے قربانیوں کی یاد دلاتاہے۔وہ اپنے دفتر میں جشن آزادی کے سلسلے میں اجلا س سے خطاب کررہے تھے۔ اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر مردان عمران خان ،تخت بھائی رحمت علی وزیر،ایس پی آپریشن گل نواز خان،سیفٹی کمیشن کے چےئرمین عبد العزیز خان،مرکزی تنظیم تاجران کے صدر ظاہر شاہ،ارشد منان ،ارشد خان ،عبد الدیان،محکمہ تعلیم، صحت، جنگلات، زراعت، ریسکیو1122 ، پبلک ہیلتھ،فنانس،لوکل گورنمنٹ اور دیگر اداروں کے سربراہان نے شرکت کی۔اجلاس میں سیفٹی کمیشن کے چےئرمین عبد العزیز خان اوراسسٹنٹ کمشنر عمران خان کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دی جو تمام تر انتظامات کوختمی شکل دے گئی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے قائمقام ضلع ناظم اسد علی نے کہاکہ ضلعی حکومت انتظامیہ کے ساتھ مل کر جشن آزادی کو بھر پور جوش و جزبے کے ساتھ منائے گی اور 13اگست کو ضلعی سطح پر آتش بازی بھی کی جائے گی ۔ انہوں نے کہاکہ پرچم کشائی کی تقریب میں نو منتخب قومی اور صوبائی اسمبلی کے اراکین کے علاوہ مردان سے تعلق رکھنے والے قومی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں اور دیگر سٹارزکو بھی مدعو کیا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ بہترین سجاوٹ پر سرکاری اداروں اور تجارتی مراکز کے مالکان میں نقد انعامات تقسیم کئے جائیں گے۔انہوں نے واپڈا حکام کو 14اگست کے موقع پر پورے ضلع میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ نہ کرنے کی ہدایت کی اور کہاکہ اس دن کو شجرکاری بھی کی جائے گی۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
دوسروں کے ساتھ اشتراک کریں

یہ خبر بھی پڑھیں

’’پرتشدد انتہا پسندی کی روک تھام‘‘کے موضوع کے حوالے سے یونیورسٹی آف چترال میں ورکشاپ کا انعقاد

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) یونیورسٹی آف چترال میں سنٹر فار ریسرچ اینڈ سیکورٹی اسٹڈیز کے ...


دنیا بھر سے

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔