شمس الرحمن تاجک – Chitral Express

شمس الرحمن تاجک

حجاج، کیلاش اور پولیس

صدیوں پہلے کے ایک دربار کا ذگر کرتے ہیں دربار میں ایک پیغام رساں پیش ہونے کی اجازت چاہتے ہیں۔ پیغام ایک خاتون کی طرف سے اس زمانے کے مسلمان حکمران حجاج بن یوسف کے نام پر ہے۔ سالوں کی مسافت پر واقع دیبل کے مقام پر کسی مسافر نے ...

مزید پڑھئے

ڈھول،ڈھونڈورا اور سیاست

ڈھول پیٹنااگر باقاعدہ فن ہے، تو ڈھونڈورا پیٹنا ایک پروفیشن۔ہمارے پیارے ملک میں یہ دونوں فن ہر پلیٹ فارم خصوصاً سیاسی پلیٹ فارم پر بے تحاشا استعمال کئے جاتے ہیں۔ اس فن میں مہارت کے لئے چند لوازمات کا ہونا انتہائی ضروری ہوتا ہے۔ ان لوازمات میں بوقت ضرورت جوڑ ...

مزید پڑھئے

بھونکتا ادیب اور جشن قاق لشٹ

ہماری ایک مقامی ادیب سے دوستی ہے کچھ دن پہلے ان کے ہاں جانے کا اتفاق ہوا۔ ان کے چھ سال کے بیٹے سے پوچھا۔ بیٹا ادیب کیسے ہوتے ہیں۔ فوراً جواب آیا کہ ’’جن کے جوتوں کے تلوے پھٹے ہوئے ہوں وہ ادیب ہوتے ہیں‘‘۔ جواب حیرت انگیز تھاگومگو ...

مزید پڑھئے

پی ٹی آئی، عوام اور قدرت

کچھ باتیں آپس میں گڈ مڈ ہوگئی ہیں۔ پہلی بات پی ٹی آئی اب سیاسی طور پر بالغ ہوگئی ہے۔ بالغ سے مراد آپ جو بھی لیں ہم پاکستان میں رہتے ہوئے سیاسی بلوغت اس سطح کو کہتے ہیں جہاں ایک سیاسی بندہ یا سیاسی پارٹی صحیح یا غلط جوڑ ...

مزید پڑھئے

تاجر برادری کا امتحان

چترال بازار دنیا کا نواں عجوبہ ہے۔ ہم جب 2006 میں اس بازار میں آئے تو لگا کہ ہم قدیم افریقہ کے کسی دیہاتی بازار میں آگئے ہیں جہاں انسانی زندگی کے لئے صرف ہوا میسر تھی۔ باقی ضروریات کے لئے آپ پیسے خرچ کرکے بھی کچھ حاصل کرنے سے ...

مزید پڑھئے

جانور ، ووٹ اور انسان،

اگر کسی سیاسی پارٹی کے نظریات کے بجائے کرائیے کے لوگ جمع کرکے مجمع کی تعداد دیکھ کر سیاسی پارٹی کی مقبولیت کا فیصلہ کیا جائے تو ایسے عوام کو جانور تصور کرنے میں کیا حرج ہے۔ اور جانوروں کے ملک میں جانور ہی اقتدار میں آئیں گے۔ دوسو روپے ...

مزید پڑھئے

بیل بھی تالی بجاتے ہیں

چترال کے سرحدی علاقوں میں اب بھی اور شہری علاقوں میں دہائیوں پہلے صاحب جائیداد لوگ بیلوں کی جوڑی پالا کرتے تھے۔ چونکہ مشینوں کے ذریعے کاشت کاری کے لئے چترال کے اکثریتی علاقے اب بھی ناموزوں اور ناہموار ہیں سڑکوں کی عدم موجودگی مشینوں کی عدم دستیابی کی اصل ...

مزید پڑھئے

اپرچترال کی بجلی

چترال کی تاریخ اس بات کاگواہ ہے کہ چترال میں شروع اور کامیاب ہونے والی تقریباً تمام تحاریک کا آغاز اپر چترال سے ہوا۔ ریاست کے دور میں بھی اپر چترال ریاستی حکمرانوں کے لئے ایک مسلسل درد سر رہا ہے اس کی وجہ شاید یہی ہے کہ لوئر چترال ...

مزید پڑھئے

ذمہ داریوں کا اشتہار

معاشرہ 70 سال سے مسلسل تنزلی کا شکار ہے، کسی بھی بہتری کی کوئی گنجائش آہستہ آہستہ معدوم ہوتی جارہی ہے۔ ہم ایک ایسے معاشرے کا حصہ ہیں جہاں ہر فرد کی رائے اس کی اپنی نظر میں نعوذ بااللہ صحیفے کا درجہ رکھتی ہے۔ باقی لوگ جتنا اور جیسا ...

مزید پڑھئے

ایک اور یتیم کا اعلان

چترال کو دو اضلاع میں تقسیم کرنا ہر لحاظ سے ایک مناسب بلکہ بہتر فیصلہ ہے۔ مگر تیاری کے بغیر یہ فیصلہ رحمت کے بجائے زحمت بن سکتا ہے۔ الیکشن کمپئن اپنی جگہ، عمران خان صاحب کئی دفعہ گزشتہ پانچ سالوں میں چترال کا دورہ بھی کرچکے ہیں، ان کی ...

مزید پڑھئے