fbpx
تازہ ترین

تفتیش کا دائرہ وسیع کرکے جنگلات کی کٹائی میں ملوث مزید افرادکے گریبانوں تک قانو ن کا ہاتھ پہنچایا جائے۔نائب ناظم فضل الرحمن

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) ویلج کونسل ایون کے نائب ناظم فضل الرحمن نے نیب کی طرف سے چترال میں محکمہ جنگلات کی رائلٹی کیس میں ملوث افسران اور دوسرے بااثر شخصیات کے خلاف کاروائی کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس کیس میں تفتیش کا دائرہ وسیع کیا جائے تاکہ مزید افرادکے گریبانوں تک قانو ن کا ہاتھ پہنچ سکے جوکہ جنگلات کی کٹائی میں ملوث ہیں۔ ایک اخباری بیان میں انہوں نے کہا ہے کہ بمبوریت میں مبینہ طور پر دو جعلی جائنٹ فارسٹ منیجمنٹ کمیٹی (جے ایف ایم سی) بنائے گئے تھے جن میں ایک کے ذمہ دار عناصر کے خلاف کاروائی عمل میں لائی گئی مگر دوسرے جے ایف ایم سی کے ذمہ دار افراداب تک دندناتے پھر رہے ہیں اور دوسرا روپ اختیار کرکے قانون اور تفتیشی اداروں کو چکمہ دینے میں کامیاب رہے ہیں۔ فضل الرحمن نے کہا ہے کہ دوسرے جے ایف ایم سی کے ذمہ دار گواہ اور مستغیث کا کردار ادا کررہے ہیں اور یوں قانون کے شکنجے سے بچ رہے ہیں ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ جعلی جے ایف ایم سیوں کے کیس کا دائرہ کار بڑہا یا جائے تاکہ مزید چہرے بے نقاب ہوں۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

اترك تعليقاً

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔
إغلاق