fbpx

صوبائی حکومت بلدیاتی نظام کی کامیابی کے لئے تمام وسائل بروئے کار لارہی ہے۔ مظفر سید

پشاور(نمائندہ چترال ایکسپریس) خیبرپختونخوا کے وزیر خزانہ مظفر سید ایڈوکیٹ کی زیر صدارت سول سیکرٹریٹ پشاور میں صوبائی فنانس کمیشن کاایک اجلاس منعقد ہواجس میں اضلاع کے مابین فنڈز کی منصفانہ تقسیم کے فارمولے، ضلع ٹیکس کے متعلق امور اورمالی طورپرکمزور تحصیل میونسپل اتھارٹیز(TMA,s) کوزیادہ سے زیادہ فنڈز کی فراہمی سمیت مختلف معاملات کاتفصیلی جائزہ لیاگیا اوربعض ضروری فیصلے کیے گئے ۔اجلاس میں کمیشن کے ممبران جن میں سینئر وزیر بلدیات عنایت اللہ خان بھی شامل ہیں نے بھی شرکت کی۔ اس موقع پر گذشتہ اجلاس کے نقات کی بھی منظوری دی گئی اور اس ضمن میں کیے گئے فیصلوں پر پیش رفت کاجائزہ لیاگیا وزیر خزانہ نے کہا کہ موجودہ حکومت اختیارات کی نچلی سطح پر منتقلی کے نظام کو مزید موثر اور فعال بنانے پر یقین رکھتی ہے انہوں نے کہا کہ فنڈز کی منصفانہ تقسیم اورپسماندہ اضلاع کی تیز ترترقی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔ وزیر خزانہ صوبائی فنانس کمیشن کے چیئرمین ہیں جبکہ اس کے دیگر ارکان میں سینئر وزیر بلدیات ،سیکرٹری پی اینڈڈی ،سیکرٹری لوکل گورنمنٹ ،سیکرٹری لاء، ایم پی ایز سمیع اللہ علیزئی، سیدمحمد علی شاہ، ڈسٹرکٹ ناظم عزیز اللہ علیزئی، ڈسٹرکٹ ناظم شانگلہ نیاز احمد ،تحصیل ناظم غازی ہری پور میر اسلم حیات خان اور تحصیل ناظم سرائے نورنگ عزیزاللہ شامل ہیں۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

اترك تعليقاً

إغلاق