fbpx
محمد اقبال شاکر

کاوشات اقبال…….آہ استاد معراج ا لدین

………….. از محمد اقبال شاکر ………..
جب کہ وقت اجل آجاتا ہے نہ ایک ساعت پیچھے ہو جاتا ہے نہ ہی ایک ساعت آگے خواہ کوئی دولت میں قارون ،تکبر میں نمرود ،شاہ زروی میں رستم ،خوبصورتی میں یوسف ؑ ،صبرمیں ایوب ؑ ،درازی عمر میں نوح ؑ بسالت میں موسیٰ ،مصوری میں مانی ،عشق میں مجنون ،عد ل و سیاست میں عمرؓ ،ملک گیری میں سکندر ،دبدبہ میں جمشید ،عیاشی میں محمد شاہ ،اقبال میں اکبر ،انصاف میں نوشیروان ،حکمت میں لقمان دانش میں ارسطو،سخاو ت میں حاتم ،طوالت قامت میں عوج بن عنق ،موسیقی میں تان سین ،شاعری میں انوری ،فردوسی و مسعدی ،مر دانگی میں محمد فاتح ،خاموشی میں ذکریا ؑ ،گریا میںیقوب ؑ ،رضا جوئی میں ابرا ھیم ؑ ،جہالت میں ابو جہل ،حیا داری میں عثمانؓ،غربت میں یحیٰ ؑ ،ذہانت میں فیضی ،شقاوت میں یزید ، حکومت میں سلیمانؑ ،شجاعت میں علیؓ ،صد ق میں ابو بکرؓ ،فقہ میں امام اعظم ،جہاد میں سلطان صلاح الدین ،سیاحت میں ابن بطوطہ ،رتبہ شہادت میں اما م حسینؓ اور پختگی معلمی میں استا د معرا ج الدین ہی کیوں نہ ہو لیکن موت سے کسی کو خلاصی نہیں ۔موت کا یقین اس سے علحید ہ نہیں ہوسکتا اس کے فاصلے کے حساب اور معیار نزول میں خواہ وہ غلطی کر لے مگر اس کویہ یقین کامل ہے کہ وہ میرے سر پر ضرور آئے گا خواہ وہ کیسا ہی ذبر دست وہ قوی او ر جوان عمر ہو مگر موت کے پنجے میں ضرور گرفتار ہوگا اس واسطے انسان کو چاہئے کہ وہ موت کے لئے ہمیشہ امادہ رہے خواہ ظاہری حالات اس کی زندگی کی کیسی ہی تا ئید کریں کیونکہ زندگی میں آنے کا صر ف ایک راستہ ہے اور جانے کے ہزاروں راستے ۔دنیا کے زندگی موت پر موقوف اگر ہم موت سے غافل ہو جائیں تو اس کا مطلب یہ نہیں کہ موت ہمیں بھول گئی۔
نہ رنج رفتگان کر رفتہ رفتہ
پہنچ جائے گا تو بھی کارواں تک
آج میری قلم کی نوک کسی بڑے سیاست دان جاگیر دار ،سنعت کار کے نا م نہیں بلکہ ایک ایسے استاد ہر دل عزیز شخصیت ،سماجی کارکن ،اصلاحی کارکن ،خدمت کرنے والا ،خدمت پر ابھارنے والا ،خدمت کا گُر سکھانے والا ،تدریس کا آغاز توحید سے شروع کر کے انجام بندہ مومن پر کرنے والا استاد کے متعلق ہے جو ضلع چترال کے ایک مردم خیز بستی تریچ محلہ ویمژد میں اسلام الدین کے ہاں 24/4/1964کو پیدا ہوا والد نے معراج الدین نام رکھا ابتدائی تعلیم گاؤ ں کے سکول سے حاصل کی ۔جب کہ ڈگری کالج چترال سے بی ۔اے کیا پشاور یونیورسٹی سے ایم ۔اے I E Rُُُُپشاور سے بی ایڈ اورAIOUسے ایم ایڈ کی ڈگری حاصل کی بحیثیت ایس ،ایس ٹی ٹیچر 10/11/1994سے تدریس کے شعبے میں چترا ل کے مختلف سکولوں میں خدمات انجام دیتا رہا اس دوران اپ تنظیم اساتذہ کے دو بار صدر جب ٹیچر اسو سی یشن کے بھی عبوری صدر رہے ہال میں وہ اپنی خدما ت گورنمنٹ سینٹینل ماڈل ہائی سکول میں انجام دے رہا تھا بحیثیت ایک بہترین مدرس وہ اپنے کام سے کا م رکھنے والا چوکس بے دار بھروسے اور خدمت کرنے والا انسان تھا سٹاف کے ساتھ انکا رویہ طلباء کے ان کا مشفانہ انداز معاشرے کے ساتھ انکا دوستانہ رویہ اور برتاؤ اس کے مسکرانہ مزاج کو صدیوں تک لوگ یاد رکھیں گے انکو اپنے پیشے کے ساتھ اخلاص و محبت اور انسانیت کی خدمت کرنے کی تحریک انکے خدمات کا بہترین اعتراف ہے استاد معرا ج الدین 17اگست 2016بروز بدھ آغاخان ہسپتال کراچی میں انتقال کر گئے اور 19اگست 2016انکے گھر حال جو ٹی لشٹ میں اپنے قبرستان میں ابدی نیند سوگئے مرحوم اپنے پیچھے ایک بیٹی چار بیٹے اور بیوہ چھوڑے ان کے جنازے میں انکے حلقہ یاران ،شاگردوں اور دوسرے لوگوں کا جم غفیر تھا ۔
ڈھونڈو گے اگر ملکوں ملکوں ملنے کے نہیں نا یاب ہیں ہم
تعبیر ہے جس کی حسرت و غم اے ہم نفسو وہ خواب ہیں ہم
اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

اترك تعليقاً

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔
إغلاق