آغا خان ہائیر سیکنڈری سکول گلگت میں جماعت ہشتم  کے طلبا کا تعارفی پروگرام – Chitral Express

کمرشل اشتہارات/ اعلانات

صفحہ اول | تازہ ترین | آغا خان ہائیر سیکنڈری سکول گلگت میں جماعت ہشتم  کے طلبا کا تعارفی پروگرام

آغا خان ہائیر سیکنڈری سکول گلگت میں جماعت ہشتم  کے طلبا کا تعارفی پروگرام

          گلگت ( نمائیندہ خصوصی ) تفصیلات کے مطابق آغا خان ہائیر سیکنڈری سکول گلگت کے انتظامیہ اور طلبا نے جماعت ہشتم میں داخلہ لینے والے بچوں کو سکول ہذا کے ماحول سے اشنا کرنے اور آغا خان ایجوکیشن سروس پاکستان کی وضع کدہ پالیسیوں کو طلبا تک پہنچانے کے حوالے سے ایک پر وقار تقریب کا اہتمام کیا ۔ پروگرام کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوااس کے بعد آغا خان ہائیر سیکنڈری سکول کے پرنسپل ظفر اقبال نے سکول کی گزشتہ تعلیمی سال کی  رپوٹ تفصیل سے پیش کی اور سکول کے قوانین و ضوابط پرمغزانداز سے طلبا اوروالدین کے گوش گزار کئے ۔ اس پروگرام میں والدین کے علاوہ گلگت بلتستان کے ماہرین تعلیم جن میں سکول کے اساتذہ کالجوں کے لیکچراراوریونیورسٹی کے پروفیسروں کے علاوہ سکولوں اورکالجوں کے ڈائریکٹر نے بھی شرکت کی اور اپنے زریں خیالات سے طلبا اوروالدین کو محظوظ کیا. مقررین میں سید ریاض حسین ڈائریکٹر اکیڈمکس گورنمنٹ ایجوکیشن گلگت ، ڈپٹی ڈائریکٹر کالیجیز فضل کریم اور ڈاکٹر تہذیب کے علاوہ آغا خان ایجوکیشن گلگت بلتسان کے آفس کی طرف سے مقصد علی شامل تھے ۔اس موقع پر منیجر مقصد علی نے جنرل منیجر برگیڈئیر(ریٹائرڈ) خوش محمد کی غیرموجودگی میں اُن کی طرف سے موصول شدہ  مبارکبادی کا پیغام  بچوں اور والدین تک پہنچا  دیا ۔ اس پروگرام میں سکول ہذا کے طلبا نے تقاریر،خاکے اورگلگت بلتسان میں بولی جانے والی پانچ  مختلف زبانوں میں نغموں کے ساتھ علاقائی رقص سے محفل کو گرمائے رکھا ۔پروگرام کے آخر میں طلبا اور والدین نے سکول کا تفصیلی دورہ کیا اور گروپ تصویر کشی کے ساتھ یہ شاندار تقریب اپنے اختتام کو پہنچی

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
دوسروں کے ساتھ اشتراک کریں

یہ خبر بھی پڑھیں

موجودہ مہنگائی کے تناسب سے پنشن میں 100فیصداضافہ کیاجائے۔آل پاکستان پنشنرزایسوسی ایشن صوبائی صدر فدامحمددرانی

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس)آل پاکستان پنشنرزایسوسی ایشن کے صوبائی صدرخیبرپختونخوا فدامحمددرانی نے چترال میں منعقد ایک ...


دنیا بھر سے

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔