fbpx

بونی میں نقب زنی کے واقعات میں تشویش ناک حد تک اضافہ،جرائم میں ملوث افراد کو قانون کے شکنجے میں لانے کا مطالبہ

بونی (کریم اللہ ) اپر چترال کے ہیڈ کوارٹر بونی کے مین  چوک میں واقع موبائیل شاپ پر آج رات نقب زنی کا واقعہ پیش آیا، جس میں چور نے دکان کا تالا توڑ قیمتی موبائل، میموری کارڈ اور یو ایس بی لوٹ لئے۔ دکان مالک فخر الحسن نے بتایا کہ آج صبح ساتھی دکاندار نے فون کرکے بتایا کہ ان کے دکان کا تالا توڑا گیا ہے جب ہم وہاں پہنچے تو دکان کا شٹر بند تھا تاہم قفل توڑ کر دکان میں سے قیمتی موبائل سمیت دیگر ایشاء غائب تھے۔ انہوں نے بتایا کہ اس واقعے سے انہیں کم از کم تیس سے پینتیس ہزار روپے کا نقصان ہوا ہے۔

یاد رہے بونی میں گزشتہ ایک ہفتے کے دوران نقب زنی کا یہ تیسرا واقعہ ہے اس سے چند روز قبل بھی بونی ہی میں دو دکانوں کا تالا توڑ کر چوری کیا گیا تھا تاہم قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے کسی کی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔

بوی کے مین چوک میں اسی طرح نقب زنی کا واقعہ انتہائی تشویش ناک امر ہے۔ بزنس کمیونٹی اور سماجی حلقے محکمہ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے دوسرے اداروں سے مطالبہ کررہے ہیں کہ ان واقعات کی جلد از جلد تحقیقات کی جائے اور جرائم میں ملوث افراد کو قانون کے شکنجے میں لایا جائے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
Print Friendly, PDF & Emailاس خبر کو پرنٹ میں حاصل کریں

متعلقہ خبریں/ مضامین

إغلاق