fbpx
تازہ ترین

پاک آرمی اور چترال سکاؤٹس کی طرف سے گولین کے متاثرہ گاؤں بوبکہ کے مقام پر فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد اور امدادی پیکیج تقسیم

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) چترال ٹاسک فورس کے کمانڈنٹ کرنل معین الدین کی خصوصی ہدایت پر چترال سکاوٹس نے جمعہ کے روز گولین کے متاثرہ گاؤں بوبکہ کے مقام پر فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد کیا جس میں 180سے زائد مریضوں جن میں بڑی تعداد میں خواتین،بچے اور بوڑھے شامل تھے کا معائنہ کرنے کے بعد ان کو مفت ادویات فراہم کی گئی۔ میڈیکل کیمپ لیفٹیننٹ کرنل ڈاکٹر شہزاد، میجر ڈاکٹر فیصل، کپٹن ڈاکٹر حمزہ اور نرسنگ اسٹا ف پر مشتمل تھی۔ اس موقع پر میجر عثمان نے 30متاثرہ گھرانوں میں فوڈ اور نان فوڈ آئٹمز تقسیم کئے جن میں خیمہ، چاؤل،آٹا،منرل واٹر، دال، چینی، سولر لائٹس شامل تھے۔ گاؤں کے عمائیدیں نے کہاکہ کرنل معین الدین نے چوبیس گھنٹوں سے پہلے پہلے اپنا وعدہ پورا کردیکھایا جس نےجمعرات کے دن علاقے کا دورہ کرکے متاثرین کے لئے امدادی پیکج اور فری میڈیکل کیمپ کا اعلان کیا تھا۔ جس پرعلاقہ عمائدین نے پاک فوج کی طرف سے امداد کی فراہمی اور فری میڈیکل کیمپ کے انعقاد پر اُن کا شکریہ ادا کیا۔ اس موقع پر ضلع ناظم مغفرت شاہ نے کہاکہ ہماری سب سے بڑی ترجیح سڑک کی بحالی ہے جس پر کام جاری ہے جبکہ پانی کی سپلائی کو بھی بحال کرنا ناگزیر ہے کیونکہ اس وادی سے چترال ٹاؤن سمیت کئی دیہات کو ابپاشی اور ابنوشی کے لئے پانی مہیاہوتا تھا۔ انہوں نے متاثرین کے لئے امدادی اشیاء کی فراہمی اور فری میڈیکل کیمپ کے انعقاد پرپال آرمی اور چترال سکاوٹس کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ ضلعی حکومت تمام سرکاری اور غیر سرکاری اداروں کی ریلیف اور بحالی کی کاوشوں میں رابطہ کاری کرنے کی کوشش کرے گی۔پاک آرمی کی زیر نگرانی سڑکوں اور پلوں کی بحالی پر بھی کام جاری ہے۔اس سلسلے میں پاک آرمی نے متاثرہ علاقے میں مشینری کی فراہمی بھی کردی ہے اور پاک فوج کے انجینئر موقع پر کام کی نگرانی کررہے ہیں۔میجر عثمان نے اس موقع پر متاثرین سے کہا کہ پاک فوج مصیبت کے اس گھڑی میں متاثرین کے شانہ بشانہ کھڑی ہے۔اُنہوں نے پاک فوج کی طرف سے متاثرین کو یقین دلایا کہ اُن کی مطالبات حکام بالا تک پہنچائے جائینگے اور پاک فوج اپنی طرف سے ہرممکن تعاون کریگی۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

إغلاق