fbpx

بونی میں لینڈ سٹلمنٹ کے حالیہ سروے کے حوالے سے اہم اجلاس کا انعقاد

بونی(نمائندہ چترال ایکسپریس)تحریک حقوق عوام اپر چترال کی طرف سے اپر چترال میں لینڈ سیٹلمنٹ کے حالیہ سروے کو منسوخ کرکے نئے سرے سے سروے کے حوالے سے چند دن پہلے ایک متفقہ قرارداد متعلقہ اداروں کو بھیجا گیا تھا جس میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ چونکہ سروے سے پہلے نہ تو مالکان زمین کو کوئی بریفنگ دی گئی تھی اور نہ ہی ان کی موجودگی میں سروے ہوا تھا لہذا سروے منسوخ کرکے نئے سرے سے سروے کیا جائے۔ اس سلسلے میں آج تحصیل کونسل ہال بونی میں ایک اہم میٹنگ کا انعقاد کیا گیا جس میں سیٹلمنٹ آفیسرمظہر علی شاہ اور چترال کے تحصیلدارشریک ہوئے۔ میٹنگ تحریک حقوق عوام کے زیر اہتمام بلایا گیا تھا جس میں تحریک حقوق عوام کے عہدیداران کےعلاوہ ، علاقہ عمائدین اور وی۔سی ناظمین بھی شریک تھے۔ ابتدائی کلمات انفارمیشن سیکرٹری تحریک حقوق عوام اپر چترال پرویز لال نے سروے سے متعلق لوگوں کے اعتراضات سیٹلمنٹ آفیسر کے گوش گزار کرتے ہوئے کہاکہ لوگوں کی زمینات کے حدود کا تعین ان کی غیر موجودگی میں کیا گیا۔ چراگاہ، ریور بیڈز اور شاملات سرکاری تحویل میں بغیر اطلاع کے لیے گئے۔ سیٹلمنٹ آفیسر نے لوگوں کے اعتراضات کے جوابات دیے اور فیصلہ کیا گیا کہ وی۔سی ناظمین اپنے وی۔سی کے چراگاہ اورریوربیڈز کی نشاندہی کریں تاکہ ریکارڈ ٹھیک کیے جائیں۔ لوگوں کی زمینات کے حدودات کی جو غلطیاں ہیں ان کی درستگی کے لیے ادارے کے زمہ داران ہر گاؤں کادوبارہ دورہ کریں گے۔ اور جس کے حدود میں غلطیاں ہونگی ان کی درستگی کی جائے گی اور لوگوں کو مطمئن کیا جائے ۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

إغلاق