fbpx

انٹی کرپشن ڈے کے حوالے سے چترال کے طلباء وطالبات کے درمیان تقریری، مضمون نویسی اور ڈرائنگ کے مقابلے منعقد

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) انٹی کرپشن ڈے کے حوالے سے چترال کے پبلک سیکٹر کالجوں کے طلباء وطالبات کے درمیان تقریری، مضمون نویسی اور ڈرائنگ کے مقابلے منعقد ہوئے جن میں بدعنوانی کے خلاف عوامی شعور بیدار کرنے اور ملک وقوم کے لئے اس کے اثرات بد کیخلاف آگہی پھیلانے کی کوشش کی گئی تھی۔ اسسٹنٹ کمشنر چترال عبدالولی خان اس موقع پر مہمان خصوصی تھے جنہوں نے مقابلوں میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والوں میں توصیفی سرٹیفیکیٹ اور شیلڈ تقسیم کئے گئے۔ اس موقع پر انہوں نے کہاکہ کرپشن کے ناسورنے معاشرے کو کھوکھلا کرکے رکھ دیا ہے اور معاشرے کو اندر ہی اندرسے ختم کرنے والی اس اژدھے کے خلاف ہمیں بحیثیت قوم جدوجہد کرنے کی ضرورت کے ساتھ معاشرے کے ہر فرد میں کرپشن کے خلاف تیارکیاجانا چاہئے۔اے سی عبدالولی خان نے کہاکہ ملک میں غربت، بے روزگاری اور مہنگائی کا بلا واسطہ اور بالواسطہ طور پر کرپشن ہی ذمہ دار ہے اور ایسے ممالک کی مثالیں ہمارے سامنے ہیں جوکہ ہم سے بعد میں آزادہوئے لیکن ترقی کے انتہا تک پہنچ گئے۔ انہوں نے طلباء وطالبات پر زور دیاکہ قوم کا مستقبل ہونے کے ناطے اپنے اندر کرپشن کے خلاف نفرت کا جذبہ پیداکرلیں اور اس ناسور کوجڑ سے اُکھاڑ پھینکنے میں اپنی توانائی اور صلاحیتوں کا بھر پور استعمال کرے۔ اس سے قبل گورنمنٹ گرلز کالج چترال کے پرنسپل پروفیسر مسرت جبین، ڈپٹی ڈی ای او ڈاکٹر عبدالمالک، پرنسپل کامرس کالج صاحب الدین،ایاززرین اور دوسروں نے بھی خطاب کیا۔ تقریری مقابلے میں گورنمنٹ گرلز کالج چترال کے طالبات بازی لے گئے جنہوں نے پانچ پوزیشن جیت لیے۔ جن میں بنفشہ امان، عمیرہ خلیل، صبا بلقیس اور دوسرے شامل ہیں۔ ججزکی کی خدمات فداالرحمن،مظفرالدین،صادق اللہ صادق اورثناء اللہ ثانی نے انجام دیے

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

إغلاق