fbpx

وائرس کے پھیلاؤ سے بچنے کے لئے ضلعی انتظامیہ اورتمام اسٹیک ہولڈر کاشام 7بجے سے تاحکم ثانی لواری ٹنل بندکرنے کافیصلہ 

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس)تین دن قبل انتظامیہ نے پبلک ٹرانسپورٹ گاڑیوں کے لئے سرنگ بند رکھنے کا اعلان کیا تھا جس سے سرنگ میں پھنسے ہوئے سینکڑوں افراد کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑاتھا۔بعد میں سرنگ کھولی گئی۔ اورچترال میں لوگوں کی آمد کا سلسلہ بدستور جاری رہا اور انتظامیہ نے پھر اعلان کیا کہ یہ سرنگ روزانہ صبح 9 بجے سے شام 7 بجے تک کھلی رہے گی۔
اتوار کے روزڈی آفس چترال میں ایک میٹنگ ہوئی جسمیں تمام اسٹیک ہولڈرز نے فیصلہ کیا کہ لواری ٹنل آج (23 مارچ شام 7 بجے سے تا حکم ثانی بند کردی جائے گی۔تاہم ادویات اوراشیائے خوردونوش کی گاڑیوں کے لئے ٹنل بند نہیں ہوگی۔اجلاس میں عوام کو اپنے گھر والوں اور دیگر رشتہ داروں کو چترال کی طرف نہ آنے کی اطلاع دینے کی تاکید کی گئی۔حکم کی خلاف ورزی کرنے والوں کو ٹنل سے واپس بھیج دیا جائے گا۔

میٹنگ میں ایم این اے چترال عبدالاکبر چترالی،ایم پی اے چترال ہدایت الرحمن،ڈی سی چترال نوید احمد،ڈی پی چترال وسیم ریاض،میجرعثمان اوراے ڈی سی حیات شاہ موجود تھےبعد میں ڈی پی اولوئیر چترال اورمیجرعثمان نے چترال بازار کا دورہ کیا۔اور دفعہ 144 کے خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کاروائی بھی کیں۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ خبریں/ مضامین

error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔
إغلاق