تازہ ترین

متعلقہ اداروں کے حکام زلزلہ متاثرین کے پیکیج میں افغان مہاجرین کوبھی شامل کریں۔

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس) افغان مہاجرین نے زلزلہ کے بعد اپنی بے کسی اور بے بسی کی طرف حکومت کی توجہ دلاتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ افغان مہاجرین کے لئے متاثرین Earthquake survivors take refuge at a damaged house in the quake-hit Shangla district in Pakistan's Khyber Pakhtunkhwa province. — AFPزلزلہ کے خصوصی پیکیج کا اعلان کیا جائے۔ایک اخباری بیان میں افغان مہاجرین نے اس بات پر دکھ اور افسو س کا اظہار کیا ہے کہ26اکتوبر کے زلزلے میں افغان مہاجرین بھی پاکستانی بھائیوں کی طرح متاثر ہوئے۔مرنے والوں کو مقامی بھائیوں نے اپنے قبرستانوں میں دفن کروایا۔کرایے کے مکانات گرگئے تو افغان مہاجرین کھلے آسمان تلے رہنے پر مجبور ہوئے۔کیونکہ تمام مکانات گرنے کی وجہ سے کرایے کا دوسرا گھر بھی دستیاب نہیں۔زخمیوں اور معذور ہونے والوں میں بھی افغان مہرجر شامل تھے۔لیکن حکومت نے ریلیف پیکیج صرف پاکستانی شناختی کارڈ رکھنے والوں کو دیا۔افغان مہاجرین کو نہ خیمہ ملا،نہ خوراک کا پیکیج دیا گیا،نہ کمبل اور دوسرا سامان ملا۔اور نہ مرنے والوں یا زخمیوں اور معذور ہونے والوں کو ریلیف مل گیا۔افغان مہاجرین نے کمشنر افغان ریفوجیز ،صوبائی حکومت،این ڈی ایم اے اور پی ڈی ایم اے سمیت تمام متعلقہ اداروں کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ زلزلہ متاثرین کے پیکیج میں افغان مہاجرین کوبھی شامل کیا جائے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ مواد

اترك تعليقاً

إغلاق