تازہ ترین

ضلع چترال کےنو نوجوانوں نے کوہ پیمائی کی تربیت حاصل کی

وادی گللگت میں “یوتھ ماوٹنیرینگ اسکل انہنسنگ کیمپ” کو پاکستان یوتھ اووٹ ریچ اور قراقرم ایکسپیڈیشن نے ارگنائز کیا تھا ضلع چترال سے نو نوجوانوں نےشرکت کی۔ ان نوجوانوں کو آغا خان رورل سپورٹ پروگرام چترال نے ایلی پروگرام کے تحت معاونت کی تھی اور اس پروگرام کو چلانے میں حکومت کینیڈا کے عالمی حالات کے ادارے نے فنڈنگ کی ہے۔ یہ نوجوان چترال کے مختلف حصوں (دروش، مستوج، بونی ) سے تعلق رکھتے ہیں اور ان کی تربیت ملانگوٹی گلیشئیر شمشال میں پاکستان اور رومانیہ کے ماہر کوہ پیماوں نے کی۔ اس ٹریننگ کے شرکاء نے پہاڑی چھڑنا، برف چھڑنا اور ریسکیو کاراوائی سے متعلق تربیت حاصل کی۔ یہ تربیت جنوری کے دس سے بیس تاریخ تک جاری رہی۔


ہمارے نمائندے سے بات چیت کرتے ہوئے آغا خان رورل سپورٹ پروگرام چترال کے انٹرپرائیز ڈیویلپمنٹ آفیسرجناب عطاء الرحمان نے کہا۔ “کہ اس ٹریننگ کا مقصد اس علاقے کے نوجوانوں میں کوہ پیمائی کو فروغ دینا ہے جس سے سیاحت کے شعبے کو فروغ ملے گا۔ چترال میں سیاحتی مہم جوئی کے بے پناہ مواقع موجود ہیں لیکن ہنر مند نوجوانوں جیسے کوہ پیما، راہبر اور پورٹرز کی اس شعبے میں کمی کی وجہ سے اس سے خاطر خواہ فائدہ نہیں اٹھایا جارہا ہے۔”



اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ مواد

اترك تعليقاً

إغلاق