تازہ ترین

چترال کے گہیریت گولین کنزروینسی سید آباد گول میں نامعلوم شکاریوں نے ایک کشمیری مارخور کا شکارکرلیا

چترال ( نمائندہ چترال ایکسپریس ) چترال کے گہیریت گولین کنزروینسی  سید آباد گول میں نامعلوم شکاریوں نے ایک کشمیری مارخور کا شکارکرلیا لیکن محکمہ وائلڈ لائف کے اہلکاروں نے ان کے گرد گھیرا تنگ کرنے کی وجہ شکاریوں نے شکارشدہ مارخور چھوڑ کر بھاگ نکلا۔ سب ڈویژنل وائلڈ لائف افیسر ارشاد احمد نے مقامی میڈیا کو بتایاکہ گزشتہ شام کو گہیریت کے کنزروینسی میں ٹھوناٹھونی کے مقام سے فائرنگ کی آواز آنے کی اطلاع انہیں موصول ہوئی جس پر انہوں نے محکمہ وائلڈ لائف اور کمیونٹی کے واچروں اور لوکل کمیونٹی کو فائرنگ کے مقام کو گھیرے میں لانے کی ہدایت جس پر نامعلوم اور ان کے ساتھی تین سالہ نر مارخور کو چھوڑ کر رات کی تاریکی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے جنگل میں فرارہوگئے۔ بعدازاں شکار کو وائلڈ لائف کے ڈویژنل آفس لایا گیا جہاں محکمہ حیوانات کے سینئر ویٹرنری ڈاکٹر شیخ احمد نے پوسٹ مارٹم کیا۔ اس موقع پر ڈی ایف او وائلڈ لائف امتیاز احمد نے کہاکہ غیر قانونی شکار پر سخت پابندی عائد ہے اور مارخور کے غیر قانونی شکارمیں ملوث افراد کو عدالت سے سخت سزا دلوایاجائے گا۔


اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ مواد

اترك تعليقاً

إغلاق