تازہ ترین

ریسکیو 1122 میں 16 جدید ایمبولینسوں سمیت اربوں روپے کے سامان چترال کو فراہمی پربعض جماعتوں کے لیڈروں کے پیٹ میں درد شروع ہو گیا ہے۔ عبداللطیف

چترال ( نمائندہ چترال ایکسپریس) پاکستان تحریک انصاف ضلع چترال کے صدر عبدالطیف نے کہا ہے کہ 70سال سے مختلف ادوار میں حکومتوں کے مزے لوٹنے والے ہسپتالوں کو ایمبولنس فراہم نہ کر سکنے والے اب ریسکیو 1122 میں 16 جدید ایمبولینسوں سمیت اربوں روپے کے سامان چترال کو فراہمی پران کے پیٹ میں درد شروع ہو گیا ہے کیونکہ تحریک انصاف کی عوام دوست اقدامات سے ان سیاسی جماعتوں کا جنازہ نکلنے والا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آل پارٹیز چترال کے نام پر ہونے والے پریس کانفرنس کے رد عمل پر اظہار خیال کرتے ہو ئے کیا انہوں نے کہاکہ پریس کانفرنس کرنے والے ہوا میں تیر چلانے کی کو ششوں میں مصروف ہیں ریسکیو 1122 خیبر پختون خوا کے ڈائریکٹر ڈاکٹر اسد علی ہیں نہ کہ امین الحق ہیں ۔ لہذا پریس کانفرنس کرنے سے پہلے معلومات کی درستگی بھی کرنی چاہیے انہوں نے کہاکہ چترال میں پاکستان تحریک انصاف کے دور میں تمام محکموں میں میرٹ کی بنیاد پر بھرتیاں کی گئیں ہیں پولیس سے لیکر ایجو کیشن میں این ٹی ایس کے ذریعے بھرتیاں کی گئیں جبکہ محکمہ بلدیات میں وویلج سیکرٹریوں کی بھرتیوں میں کچھ غلطیاں ہو ئیں وہ بھی جماعت اسلامی کے وزیر کے کاوشوں کا نتیجہ تھا جنہوں نے ان بھرتیوں میں مداخلت کرکے شکوک شبہات پیدا کئے تھے۔ستر سال سے خون چوسنے والی سیاسی پارٹیوں کو یقین دلاتا ہو ں کہ ریسکیو 1122میں بھرتیاں شفاف طریقے سے کی جائیگی لیکن اس عظیم منصوبے کو متنازعہ بنانے کی کو شش نہ کی جائے کیونکہ ریسکیو 1122چترال کے لئے جدید سازو سامان کی فراہم کی جا رہی ہے ‘ لہذا انہیں اپنے پارٹی لیڈروں کے گریبان پکڑ لینا چاہئے جنھوں نے جان بوجھ کر چترال کی پسماندگی میں کردار ادا کیا ہے

Advertisements

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ

زر الذهاب إلى الأعلى