تازہ ترین

مدرسہ ضیاء القرآن چترال سے فارع التحصیل ہونے والے طالبات میں تقسیم اسناد کی تقریب

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) چترال کے معروف عالم دین مولانا اسرار الدین الہلال کے زیر سرپرستی دینی تعلیمی ادارہ مدرسہ ضیاء القرآن سے فارع التحصیل ہونے والے طالبات میں تقسیم اسناد کی تقریب منعقدہوئی جس میں ضلع ناظم چترال مغفرت شاہ مہمان خصوصی تھے جبکہ جماعت اسلامی ضلع چترال کے امیر مولانا جمشید احمد بھی اس موقع پر موجود تھے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ضلع ناظم نے کہاکہ تعلیم کے میدان میں ماسٹر اور پی ایچ ڈی کی ڈگریاں لینا اور اعلیٰ ملازمتوں پر پہنچنا اس وقت تک ایک مسلمان کے لئے بے کار ہے جب تک وہ قرآن کی تعلیم بھی حاصل نہ کرےImage may contain: 12 people, people standing and people sitting کیونکہ دین کو سمجھنے کے لئے قرآن اور حدیث ہی بنیادی ذرائع ہیں اور یہ بات خوش آئند ہے کہ چترال میں خواتین کی دینی تعلیم کا بیڑا اُٹھاتے ہوئے مولانا اسرارالدین الہلال نے ضیاء القرآن جیسی معیاری ادارے کی بنیاد ڈالی جس سے دختران قوم فیضیاب ہورہی ہیں۔ انہوں نے فارع ہونے والی طالبات پر زور دیا کہ وہ قرآن وسنت کی علم کو دوسروں تک پہنچانے میں کوئی کسر نہ چھوڑیں ۔ انہوں نے کہاکہ مولانا الہلال ایک حق پرست عالم دین کے طور پر جانے جاتے ہیں جس نے کبھی بھی حق بات کو ببانگ دہل کہہ دینے میں ڈر اور خوف محسوس نہ کیا۔ ضلع ناظم نے کہاکہ پاکستان کا قیام کلمہ طیبہ کی بنیاد پر عمل میں آیا تھا اور یہ ہماری بدقسمتی ہے کہ سات دہائی سال گزرجانے کے باوجود یہاں قرآن کے احکامات اور تعلیمات پر مبنی نظام نافذ نہ ہوسکا اور یہ قرآن کے طالب علموں پر فرض عائد ہوتی ہے کہ وہ اس کے نفاذ کے سلسلے میں بھی عملی قدم اٹھائیں۔ ضلع ناظم نے مدرسہ ضیاء القرآن میں مختلف ترقیاتی کاموں کے لئے تین لاکھ روپے کی گرانٹ کا اعلان کیا۔ جماعت اسلامی کے ضلعی امیر مولانا جمشید احمدنے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہاImage may contain: 1 person, beardکہ ایک مسلمان پر قرآن پاک کے کئی حقوق ہیں جن میں سے ایک قرآن فہمی ہے اور ہر مسلمان کوچاہیے کہ وہ قرآن کا خاطر خواہ علم حاصل کرے۔ انہوں نے کہاکہ چترال میں خواتیں کے لئے قرآن فہمی اور تجوید کے سلسلے میں مدرسہ ضیاء القرآن کا ایک نمایان اور ممتاز کردار ہے۔ اس سے قبل مدرسے کا مہتمم مولانا اسرارالدین الہلال نے کہاکہ مدرسے سے اس سال 46طالبات نے مدرسہ رابطۃ المدارس کے امتحان میں ممتاز درجہ یعنی اے گریڈ میں کامیابی حاصل کی جبکہ مدرسہ ضیاء القرآن ضلع چترال میں وہ واحد مدرسہ ہے جہاں تجوید قرآن کی تعلیم دی جاتی ہے ۔ انہوں نے کہاImage may contain: 1 person, beard and indoorکہ تجوید اور قرآت کے لئے محکمہ تعلیم میں استانیوں کی بھرتی کے لئے اس مدرسے کے اسناد کو قبولیت کا درجہ حاصل ہے اور یہ قابل فخر بات ہے کہ گزشتہ سالوں سے اس مدرسے کے فارع التحصیل طالبات کو ہی ملازمت کے لئے چن لئے گئے۔ انہوں نے کہاکہ رمضان المبارک کے دوران خواتین کے لئے قرآن فہمی کی خصوصی کلاسیں چلائے جاتے ہیں جبکہ اس مدرسے سے انفرادی طورپر بھی کئی اعلیٰ تعلیم یافتہ حضرات قرآن کی تعلیم حاصل کرچکے ہیں اور اب اعلیٰ حکومتی عہدوں پر فائز ہیں۔
اس موقع پر فارع التحصیل ہونے والی طالبات میں ضلع ناظم کے علاوہ امیر جماعت اسلامی مولانا جمشید احمد ، چترال پریس کلب کے صدر ظہیرالدین اور سینئر صحافی شہریار بیگ اور سید نذیر حسین شاہ نے بھی اسناد تقسیم کی جنہیں طالبات کی طرف سے ان کے باپ یا بھائیوں نے وصول کیا۔ جماعت اسلا می کے تحصیل امیر چترال عتیق الرحمن نے اسٹیج سیکرٹری کے فرائض انجام دئیے۔

Advertisements

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ

زر الذهاب إلى الأعلى