تازہ ترین

ضلعی انتظامیہ کی طرف سے چوری چھپے آنے اور قرنطینہ سے بچ جانے والوں کے خلاف مہم،متعدد افراد قرنطینہ میں داخل

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) ضلعی انتظامیہ نے ڈاؤن ڈسٹرکٹ سے چوری چھپے آنے اور قرنطینہ سے بچ جانے والوں کے خلاف مہم چلاتے ہوئے متعدد افراد کو ان کے گھروں اور رہائشی مکانات سے واپس لاکر قرنطینہ میں داخل کرنے کاسلسلہ شروع کیا ہے۔ ڈپٹی کمشنر لویر چترال نوید احمد نے کہا ہے کہ متاثرہ جگہوں سے چترال سفر کرنے والوں کا اخلاقی فرض بنتا ہے کہ وہ چودہ دن قرنطینہ میں گزار لیں تاکہ ان سے کرونا کی مہلک وائرس کے پھیلنے کا خطرہ نہ رہے۔ انہوں نے عوامی حلقوں کی طرف سے اس سلسلے میں ضلعی انتظامیہ کے ساتھ تعاون کرکے ایسے افراد کے بارے میں اطلاع کی فراہمی پر خوشی کا اظہار کیاہے اور اسے مزید اضافے پر زور دیا ہے۔ دریں اثناء اتوار کے روز اسسٹنٹ کمشنر چترال عبدالولی خان نے چترال شہر میں متعدد مقامات سے ان افراد کو قرنطینہ منتقل کردیا جوکہ خفیہ طریقے سے شہر اور مضافات میں داخل ہونے میں کامیاب ہوئے تھے۔۔

Advertisements

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ

زر الذهاب إلى الأعلى