آل پارٹیز اپر چترال کی بونی میں میٹنگ،متفقہ طور پرقرارداد منظور

اپر چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس)آل پارٹیز اپر چترال کی میٹنگ زیرِ صدارت فضل الرحمٰن صدر اے۔این۔پی اپر چترال شاہ وزیر ہاوس بونی میں منعقد ہوئی جس میں اپر چترال کے مختلف سیاسی پارٹیوں کی نمائیندگان نے شرکت کی۔میٹنگ مین امیر اللہ پی۔پی۔پی، مولانا جعفر خان جے۔یو۔ائی،کشافت یونس مسلم لیگ،ظفراللہ پروازؔ مسلم لیگ،شاہ وزیر اے۔این۔پی،فیض الرحمٰن اے۔این۔پی، سردارحکیم پی۔ٹی۔ائی اور پرنس سلطان الملک مسلم لیگ شامل تھے۔ میٹنگ میں متفقہ طور پر قرار داد منظور ہوئی۔
قرارداد میں عوامی منتخب نمائیندوں اورانتظامیہ سے مطالبہ کیا گیا کہ کرونا وائرس کے تشویشناک صورت حال کے پیش نظر اپر چترال میں کرونا ٹیسٹنگ لیب کی فوری سہولت دی جائے۔ یہ کہ تورکھو،موڑکھو میں قرنطینہ مرکز کا قیام عمل میں لایا جائے۔تاکہ بونی مرکز پر بوجھ کم ہو۔نیچے اضلاع سے آنے والے لوگوں کو ان کے قریبی علاقوں پر منتقل کر کے نگرانی کے لیے طریقہ کار واضع کی جائے۔پشاور وَ دیگر علاقوں سے چترال آنے والے مسافروں کو اس وقت بھاری کرایہ ادا کرکے آنا پڑتا ہے اور ٹرانسپورٹر حضرات حالات سے ناجائز فائدہ اُٹھارہے ہیں۔ ان پر کڑی نظر رکھا جائے۔موجودہ صورت حال کے پیش نظر اپر چترال میں کل وقتی ڈی ایچ اوتعینات کی جائے۔دوسرے اضلاع سے آنے والے مال بردار گاڑی،مرغی فروش اور سبزی فروشوں کو حالات کے پیش نظر حفاظتی اقدامات کا پابند بنایا جائے۔جو اب تک کسی بھی حفاظتی ہدایات پر عمل پیرا نہیں ہیں۔رمضان المبارک اور لاک ڈاون کے پیش نظر یوٹلیٹی سٹورز میں ضروری اشیاء کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ تاکہ عوام کو حکومت کے اعلان کردہ پیکیج سے مکمل مستفید ہونے کا موقع مل سکے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔