تازہ ترین

شہزادہ افتخار الدین نے اپر چترال کے آل پارٹیز کے رہنماؤں کے مطالبے کی حمایت کرتے ہوئے پرویز لال کے خلاف کیس واپس لینے کا مطالبہ کیا ہے

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) چترال سے قومی اسمبلی کے سابق رکن شہزادہ افتخار الدین نے اپرچترال کی ضلعی ایڈمنسٹریشن پر زور دیا ہے کہ علاقے میں امن امان کی آئیڈئل صورت حال کو برقرار رکھنے کے لئے تحریک حقوق اپر چترال کے رہنما پرویز لال کے خلاف نقص امن کے سلسلے میں جاری کردہ گرفتاری کے وارنٹ کو فوری طور پر واپس لیا جائے۔ ایک اخباری بیان میں انہوں نے کہاکہ گزشتہ کئی سالوں سے پی ٹی آئی حکومت نے چترال اور خصوصاً اپر چترال کو ترقی کے میدان میں نظر انداز کردیا ہے اور نئی ضلعے کا شوشہ چھوڑ کر کوئی سہولت نہیں دی ہے اور نہ ہی پورے طور پر دفترات قائم ہیں اور اس وجہ سے عوا م میں اضطراب کا پایا جانا فطری امر ہے۔ انہوں نے کہاکہ ریشن کے مقام پر پیدل پل کی بحالی میں بھی غیر معمولی تاخیر سے علاقے کے عوام میں مایوسی پھیل گئی تھی اور ایسے حالات میں تحریک حقوق عوام اپر چترال میدان میں آکر عوام کی جذبات واحساسات کی ترجمانی کی تھی۔ انہوں نے کہاکہ ایسے حالات میں ضلعی انتظامیہ کا قدم جلتی پر تیل کا کام دے سکتی ہے اور پرویز لا ل کی گرفتاری ایک جمہوری حکومت کے لئے باعث شرم ہے۔ انہوں نے اپر چترال کے آل پارٹیز کے رہنماؤں کے مطالبے کی حمایت کرتے ہوئے پرویز لال کے خلاف کیس واپس لینے کا مطالبہ کیا۔


اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
مزید دیکھائیں

متعلقہ مواد

إغلاق