تازہ ترین

شیڈو کے ٹوٹے ہوئے کھمبے جان و مال کےلئے شدید خطرہ بن چکے ہیں، اعلیٰ حکام نوٹس لیں۔

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس)اپر چترال کے علاقہ چپاڑی سے تعلق رکھنے والے صارفین بجلی نے شیڈو اور واپڈا کے اعلیٰ حکام اور ضلعی انتظامیہ کوخبردارکرتے ہوئے کہا ہے کہ علی باغ چپاڑی میں واقع ہمارے گھر کے ساتھ نصب شیڈو کا کھمبا جو کہ کچھ سال پہلے شدید برف باری کی وجہ سے ٹوٹ چکا ہے، ہماری جان و مال کیلئے شدید خطرہ بن گیا ہے۔ ہائی وولٹیج پاور سپلائی کی لائن اس ٹوٹے ہوئے کھمبے سے گزر رہی ہے جسے لکڑی کے ڈنڈوں سے سہارا دینے کی عارضی کوشش کی گئی ہے۔ شیڈو اور واپڈا کے مقامی نمائندوں اور حکام کے علم میں کئی بار نوٹس لانے کے باوجود ابھی تک یہاں نیا کھمبا نصب نہیں کیا گیا۔ اب اس کھمبے میں اتنی سکت نہیں کہ یہ تیز ہواؤں یا بارشوں کو سہہ سکے، ایسے میں اگر اس کھمبے کے گرنے کی صورت میں ہمارا کوئی نقصان ہو گیا یا کوئی حادثہ پیش آیا تو اس کی تمام تر ذمہ داری شیڈو اور واپڈا حکام پر ہوگی۔

Advertisements

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ

زر الذهاب إلى الأعلى