خیبر پختونخوا

حکومت کرش پلانٹ اور ماربل سیکٹر کے مسائل حل کرکے ان کے مشکلات کم کرے۔کوآرڈینیٹرسرتاج احمد خان کی چیف ایگزیکٹو کے پی ازمک جاوید خٹک سے ملاقات

پشاور(چترال ایکسپریس)فیڈریشن چیمبرزآ ف کامرس اینڈانڈسٹری خیبرپختونخواکے کوآرڈینیٹرسرتاج احمد خان نے چیف ایگزیکٹو کے پی ازمک جاوید خٹک سے ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ کو درپیش مسائل کے حوالہ سے اجلاس منعقد کی گئی۔ اجلاس میں سرتاج احمد خان نے بتایا کہ ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ کو جومسائل ومشکلات درپیش ہے جس سے ترقیاتی کام بند ہونے کا خدشہ ہے،حکومت کرش پلانٹ اور ماربل سیکٹر کے مسائل حل کرکے ان کے مشکلات کم کرے۔ انہوں نے کہاکہ ملاکنڈ،بونیر،چترال، مہمند، باجو ڑ،مردان، پشاور،نوشہرہ سمیت دیگر اضلاع میں ماربل سیکٹر اور کرش پلاٹ اونر کو مختلف مسائل کا سامناکرناپڑتاہے جس سے تعمیراتی شعبے پر منفی اثرات مرتب ہورہی ہےں اور وزیراعظم عمران خان کی جانب سے تعمیراتی شعبے کے پیکج بھی ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ بندش سے متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔ انہوں نے کہاکہ وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے معاون خصوصی برائے انڈسٹری عبدالکریم خان سے ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ کے مسائل پر بات کی جس نے جاوید خٹک کو ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ کے مسائل کے حل کے لئے فوکل پرسن مقرر کردیاگیاتھا جنہوں نے کمیٹی تشکیل دے دیا اور اس کمیٹی میں ایف پی سی سی آئی ،ماربل سیکٹر اور کرش پلانٹ کو شامل کرکے ان کا موقف بھی سن لیں۔ اس موقع پر جاوید خٹک نے کرش پلانٹ اور ماربل سیکٹر کے مسائل حل کرنے پر اتفاق کرتے ہوئے کہاکہ ایف پی سی سی آئی رشکئی جلوزئی، غازی اور چترال اکنامک زون ڈیولپمنٹ میں تعاون کرے تاکہ صوبے معاشی، صنعتی لحاظ سے ترقی کرکے بے روزگاری کا خاتمہ ممکن ہوسکے اور ایف پی سی سی آئی سرمایہ کاری میں موثر رول اداکریں۔ انہوں نے کہاکہ ایف پی سی سی آئی آفس کو ڈیجٹیلائز کرکے ٹیکنیکل سپورٹ فراہم کرینگے ،اجلاس میں ممتازصنعتکار زاہد شنواری بھی موجود تھے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
مزید دیکھائیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔