خیبر پختونخوا

وزیراعلیٰ محمود خان کا معمر شہریوں کو اپنے ہی علاقوں میں کورونا سے بچاو¿ کی ویکسین لگانے کے لیے موبائل کورونا ویکسینیشن سروس کا با قاعدہ افتتاح

پشاور(چترال ایکسپریس)وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے معمر شہریوں کو اپنے ہی علاقوں میں کورونا سے بچاو¿ کی ویکسین لگانے کے لیے جمعرات کے روز موبائل کورونا ویکسینیشن سروس کا با قاعدہ افتتاح کر دیا ہے۔ موبائل ویکسینیشن سروس کے ذریعے 60 سال اور اس سے زائد عمر کے شہریوں کی کورونا سے بچاو¿ کی ویکسینیشن کی جائے گی۔ ابتدائی مرحلے میں تین گاڑیاں صوبائی دارالحکومت پشاور کے مضافاتی علاقوں میں مختلف روٹس پر چلائی جائیں گی جبکہ موبائل ویکسینیشن منصوبے کو جلد دیگر اضلاع تک توسیع دی جائے گی تاکہ شہریوں کو کورونا سے بچاو¿ کی ویکسین لگانے میں کسی مشکل کا سامنا نہ کرنا پڑے۔
کابینہ اراکین تیمور سلیم جھگڑا، قلندر خان لودھی، شہرام خان ترکئی، محب اللہ خان، کامران بنگش بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیر اعلیٰ نے شہریوں کی صحت کو اپنی حکومت کی اولین ترجیح قرارد دیتے ہوئے کہا کہ صوبے میں شہریوں کو ہسپتالوں و دیگر سنٹرز میں ویکسین لگانے کا عمل زور وشور سے جاری ہے۔ صوبہ بھر میں روزانہ کی بنیاد پر 25 ہزار افراد کی کورونا سے بچاو¿ ویکسینیشن کی جا رہی ہے جبکہ آئندہ ماہ کے لیے روزانہ 60 ہزار افراد کی ویکسینیشن کا ہدف مقرر کیا گیا ہے جسے مستقبل قریب میں 1 لاکھ تک بڑھایا جائے گا۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ موبائل ویکسینیشن سروس کے ذریعے وہ بزرگ شہری جو کہ ہسپتالوں تک نہیں جاسکتے یا کورونا وباءکے باعث ہسپتال نہیں جانا چاہتے ان کی اپنے ہی علاقوں میں ویکسینیشن کی جائے گی۔ محمود خان نے شہریوں پر زور دیا کہ وہ اپنے اور پیاروں کو اس وبا سے بچانے کے لیے ویکسین ضرور لگوائیں۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔