تازہ ترین

گرم چشمہ: اوچو پل کی ناقص تعمیر پراہلیان علاقہ کا احتجاج کی دھمکی

گر م چشمہ (نمائندہ چترال ایکسپریس) این ایچ اے کے حوالے ہونے کے بعد گرم چشمہ روڈ کی حالت پہلے سے زیادہ خراب ہوگئی ہے۔ گرم چشمہ روڈ پر موجود تین چھوٹے چھوٹے پل تاحال مرمت نہ ہوسکے۔ اہلیان علاقہ کے شدید احتجاج اور میڈیا پر حالت کی سنگینی کے بارے میں بار بار خبریں نشر ہونے کے بعد این ایچ اے کے ذمہ داروں نے پلوں کی تعمیر کے لئے کسی ٹھیکہ دار سے بات کی مگر ٹھیکہ دار خود آکر کام کرنے کے بجائے ایک ترکان کو پل کی تعمیر کا ٹھیکہ بیچ دیا۔مذکورہ ترکان نے پل کو کھولنے کے 72 گھنٹے بعد بھی پل کی تعمیر کا کام شروع نہیں کروا سکا۔ دو دن کے احتجاج کے بعد منگل کے روز مذکورہ ترکان پل کے سائٹ پر آیا اور ٹوٹے ہوئے شہتیر جوڑکر پل تعمیر کرنے کی کوشش کرنے لگا۔ جس پر علاقے کے لوگوں نے شدید احتجاج کیا۔ اہلیان علاقہ کا موقف تھا کہ مذکورہ پل کے تمام شہتیر بیچ میں سے ٹوٹ چکے ہیں اور کناروں سے کیڑے لگنے کی وجہ سے قابل استعمال نہیں رہے۔ اس لئے پل کی تعمیر نئے شہتیر لا کر باقاعدہ این ایچ اے کے انجینئرز کی موجودگی میں کیا جائے۔ اب تک نہ تو این ایچ اے کا کوئی انجینئر مذکورہ پل کے سائٹ کا دورہ کیا ہے اور نہ ہی کام کے کوالٹی چیک کرنے کے لئے کوئی اور ذمہ دار موجود ہے۔اہلیان علاقہ  نے ہمارے نمائندے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اگر پل کی تعمیر میں تاخیر کا سلسلہ جاری رہا اور اسی طرح ناقص تعمیری کام جاری رہا تو این ایچ اے کے خلاف شدید احتجاج کیا جائے گا۔ مذکورہ ٹھیکہ دار وہی پرانے شہتیر جو کہ نوے فیصد ٹوٹ چکے ہیں ان کے اوپر رنگ و روغن کرکے دوبارہ سے لگا کر پیسے بٹورنا چاہ رہا ہے۔ جس کی علاقے کے لوگ ہر گز اجازت نہیں دیں گے۔ اُنہوں نےایم این اے، ایم پی اے، وزیر زادہ، ضلعی انتظامیہ اور این ایچ اے کے حکام سے اس سلسلے میں فوری ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے اور کہا ہے کہ بصورت دیگر علاقے میں تمام تر احتجاج اور حالت کی خرابی کی ذمہ داری مذکورہ اداروں اور افراد پر ہوگی۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
مزید دیکھائیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔