تازہ ترین

تمام محکموں اوراداروں میں عوام کو سہولیات کی فراہمی کیلئے سٹیزن فیسیلیٹیشن سنٹراورسروس ڈیلیوری سنٹرز قائم کئے جارہے ہیں وزیراعلی محمود خان

پشاور(چترال ایکسپریس)وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے کہاہے کہ صوبے میں دیگر شعبوں کی طرح ٹیکسوں میں بھی بڑے پیمانے پر اصلاحات کا عمل جاری ہے جس کی بدولت موجودہ صوبائی حکومت نے سالانہ ریونیو میں خاطر خواہ اضافہ کیا ہے۔ موجودہ حکومت کے قیام کے وقت سالانہ ریونیو31 ارب روپے تھاجسے بڑھا کر 56 ارب روپے کردیا گیا ہے۔اُنہوں نے کہاکہ کوروناوباءکی وجہ سے مشکل مالی صورتحال کے باوجود حکومت نے صوبائی ٹیکسوں میں کوئی اضافہ نہیں کیا بلکہ بہت سے ٹیکسوں میں عوام کو ریلیف دیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ سرکاری ملازمین اور پنشنرز سمیت تمام عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولیات کی فراہمی اور اُن کے مسائل کا بروقت حل ہمارے اصلاحاتی ایجنڈے کا محور ہے۔ ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے جمعرات کے روز اکاونٹینٹ جنرل خیبرپختونخوا کے دفتر میں قائم پنشنر ز فسلٹیشن سنٹر اور انفارمیشن اینڈ کمپلینٹ سیل کی افتتاحی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔وزیراعلیٰ کے معاون خصوصی کامران بنگش ، کنٹرولر جنرل آف اکاونٹس پاکستان فرخ احمد حامدی،اکاونٹینٹ جنرل خیبرپختونخوا مرتضیٰ خان، سیکرٹری اطلاعات ارشد خان و دیگر بھی تقریب میں شریک تھے۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ سرکاری محکموں اور اداروں میں اصلاحات شروع کرنے کا کریڈٹ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو جاتا ہے۔ 2013 میں پی ٹی آئی کی حکومت نے اصلاحات کا عمل زیرو سے شروع کیا تھا اور اب اس پر خاطر خواہ پیشرفت ہو چکی ہے اور یہی وجہ ہے کہ آج خیبرپختونخوا اصلاحات کے عمل میں سب سے آگے ہے۔ وزیراعلیٰ نے مزید کہا کہ صوبے کے عوام نے ان اصلاحات کی بدولت ہی پی ٹی آئی کو دو تہائی اکثریت سے دوبارہ اقتدار میں لایا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ تمام محکموں اور اداروں میںعوام کو سہولیا ت کی فراہمی کیلئے سٹیزن فیسیلیٹیشن سنٹر اورسروس ڈیلیوری سنٹرز قائم کئے جارہے ہیں جن کا حتمی مقصد عوام کوایک ہی چھت کے نیچے تمام تر سہولیات کی فراہمی کو یقینی بناناہے۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ جن سرکاری محکموں کا عوام سے براہ راست تعلق ہے ان میں مزید اصلاحات بھی کی جائیں گی تاکہ عوام کی جو توقعات ہیں ان کے مطابق یہ محکمے انہیں ڈیلیور کریں۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ اکاو¿نٹینٹ جنرل آفس میں اصلاحات کا نفاذ قابل تحسین ہے اور انہوں نے اُمید ظاہر کی کہ لوگوں کو زیادہ سے زیادہ سہولیات کی فراہمی کیلئے اے جی آفس میں اصلاحات کا عمل آئندہ بھی جاری رہے گا۔ قبل ازیں وزیراعلیٰ نے پنشنرز فیسیلیٹیشن سنٹر اور انفارمیشن اینڈ کمپلینٹ سیل کا باضابطہ افتتاح کیااور مذکورہ سنٹرز کے مختلف حصوں کا دورہ بھی کیا۔ وزیراعلیٰ کو سنٹرز میں پنشنرز کو فراہم کی جانے والی سہولیات کے بارے میں تفصیلی بریفینگ بھی دی گئی۔
<><<><><>

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
مزید دیکھائیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔