تازہ ترین

وزیراعلیٰ محمود خان کااچانک دوروں کا سلسلہ جاری،شیرگڑھ ایکسائز چیک پوسٹ کا تمام عملہ معطل،

درگئی ہسپتال میں علاج معالجے کی ناقص انتظامات، صفائی کی ابتر صورت حال اورادویات کی عدم دستیابی پر ہسپتال کا ایم ایس اور ڈی ایم ایس معطل

پشاور(چترال ایکسپریس)وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے اچانک دوروں کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے اتوار کے روز ضلع مردان اور ضلع ملاکنڈ کے مختلف علاقوں کا دورہ کیا۔ وزیراعلیٰ بغیر کسی سکیورٹی اور پروٹوکول ان اضلاع کے ہسپتالوں ، ایکسائز چیک پوسٹوں اور دیگر عوامی مقامات کا اچانک دورہ کیا۔ ضلع مردان کے علاقہ شیر گڑھ میں ایکسائز چیک پوسٹ کا دورہ کرکے وزیر اعلیٰ نے چیک پوسٹ پر تعینات تمام عملے کو معطل کردیا۔ عملہ گرمی کا بہانہ بنا کر سڑک پر گاڑیوں کی چیکنک چھوڑ کر کمروں میں آرام کررہے تھے۔ اہلکاروں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ اگر وہ خود گرمی میں نکل کر معاملات کا جائزہ لے رہے ہیں تو سرکاری اہلکاروں کو بھی اپنی ڈیوٹی صحیح طریقے سے ادا کرنی ہوگی اور انہیں تنخواہ اسی کام کی ملتی ہے۔وزیر اعلیٰ نے مردان کے بعض مقامات میں صفائی کی ابتر صورتحال پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے صفائی کی صورتحال جلد سے جلد بہتر بنانے کے لئے متعلقہ ٹی ایم اوز کو وارننگ جاری کی۔اس دوران وزیراعلیٰ نے درگئی ہسپتال کا بھی دورہ کرکے وہاں پر فراہم کی جانے والی طبی سہولیات کا جائزہ لیا۔ انہوں نے ہسپتال میں علاج معالجے کی ناقص انتظامات، صفائی کی ابتر صورت حال اور ادویات کی عدم دستیابی پر ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ اور ڈپٹی میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کو فوری طور پر معطل کرنے کے احکامات جاری کرتے ہوئے دیگر عملے کو وارننگ جاری کی۔ وزیر اعلیٰ نے اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر ملاکنڈ اور ڈی ایچ او ملاکنڈ سے وضاحت بھی طلب کی۔ سخاکوٹ میں ٹریفک مینجمنٹ کی خراب صورتحال کا نوٹس لیتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے سخاکوٹ کے ٹریفک انچارچ اور دیگر ذمہ دار عملے کو بھی معطل کر دیا۔ اس طرح وزیراعلی نے شیر گڑھ پولیس اسٹیشن کا کا بھی دورہ کیا۔ وزیر اعلی نے پولیس اسٹیشن میں موجود سائلین اور حوالاتیوں سے ملے اور ان سے پولیس اسٹیشن میں سہولیات اور عملے کے رویے کے بارے میں معلومات حاصل کی۔ وزیر اعلی پولیس اسٹیشن میں سی سی ٹی وے کیمرکی خرابی ، صفائی کی ناقص صورتحال اور حوالات میں بنیادی سہولیات کی عدم دستیابی اور پولیس اسٹیشن کے عملے کی طرف سے سائلین کے ساتھ غیر مناسب رویے پر پولیس اسٹیشن کے انچارج لیوی صوبیدار کو بھی معطل کردیا ۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا جو سرکاری اہلکار اپنی فرائض منصبی کی انجام دہی میں غفلت برتے گا اس کے خلاف سخت کارروائی ہوگی اور وہ سیدھا گھر جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ تمام سرکاری محکموں اور اہلکاروں کو عوامی خدمت کو اپنا شعار بنا ناہوگا اور اس سلسلے میں کسی بھی قسم کی غفلت اور کوتاہی برداشت نہیں ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ بہتر عوامی خدمات کی فراہمی اور عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولیات کی فراہمی پاکستان تحریک انصاف حکومت کی تمام اقدامات کا محور ہے اس پر کسی صورت کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا، تمام سرکاری محکموں کو اس سلسلے میں تسلی بخش کارکردگی دکھانی ہوگی اور سرکاری اہلکاروں کو اپنے فرائض کی بطریق احسن انجام دہی کو یقینی بنانا ہوگا بصورت دیگر کسی کے ساتھ کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
مزید دیکھائیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔