تازہ ترین

چینی 104روپے سے زیادہ فی کلوگرام فروخت کر نے والوں کو پچاس ہزار روپے جرمانہ کیا جائےگا۔اے ڈی کنزیومر پروٹیکشن چترال

چترال ( محکم الدین ) حکومت نے عوام کو سستی چینی فراہم کرنے اور مارکیٹ میں چینی کی قیمت کو مستحکم رکھنے کیلئے سخت احکامات صادر کئے ہیں ۔ اور قیمتوں کوکنٹرول کرنے والے اداروں کو ہدایت کی ہے ۔ کہ وہ سختی سے اس پر عملدر آمد کو یقینی بنائیں ۔ اس سلسلے میں اسسٹنٹ ڈائر یکٹرکنزیومر پروٹیکشن چترال عرفان عزیز نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ۔ کہ گورنمنٹ کی طرف سے یوٹیلٹی سٹورز میں چینی 85 روپے کنزیومر کو فراہم ہوتی ہے ۔ لیکن مارکیٹ میں دکاندار من مانی کرکے 120 روپے فی کلوگرام فروخت کرتے ہیں ۔ جو صارفین پر ظلم کی انتہا ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ حکومت نے کنزیومرز کو سہولت دینے کیلئے فی کلوگرام 104 روپے مقرر کی ہے ۔ جس کے تمام ڈیلرز اور دکاندار پابند ہوں گے ۔ کسی کو بھی حکومتی ریٹ سے ایک روپے زیادہ لینے کی اجازت نہیں ہو گی ۔اگر کسی کے خلاف 104 روپے سے زیادہ فی کلوگرام چینی فروخت کر نے کے بارےمیں شکایت ملی ۔ تو اسے پچاس ہزار روپے جرمانہ کیا جائےگا۔ اسسٹنٹ ڈائریکٹر نے کہا ۔ کہ اس حوالے سے تمام چینی ڈیلروں کو ہدایت کی جاتی ہے ۔ کہ وہ چینی سرکاری نرخ کے مطابق 104 روپے پر فروخت کریں ۔ اضافی قیمت لینے کی کوشش ہر گز نہ کریں ۔ ایسی صورت میں کسی سے رو رعایت نہیں کی جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ چترال کے یو ٹیلٹی سٹورز میں چینی کی کوئی کمی نہیں ہے ۔ اور ریجنل منیجر یوٹیلٹی سٹورز شفیق احمد کے مطابق اپراور لوئر چترال میں 532 میٹرک ٹن چینی موجود ہے ۔ جو کہ دونوں اضلاع کے تین سے چار مہینوں کیلئے کافی ہے ۔ عرفان عزیز نے کہا ۔ کہ صارفین پر اضافی بوجھ کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا ۔ اور حکومت کی کوشش ہے ۔ کہ عوام کو سہولت ملے۔ انہوں نے عوام سے اپیل کی ۔ کہ یکم نومبر کےبعد چینی کی 104 روپےسے زیادہ قیمت پر فروخت کرنے والوں کے خلاف اپنی شکایات موبائل نمبر 03333339733 پر دے سکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ حکومتی احکامات کو یقینی بنانےکیلئے تمام بازاروں کی چیکنگ کی جائے گی ۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔