تازہ ترین

*سانحہ اے پی ایس کی ساتویں برسی کے موقع پر وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان کا بیان*

پشاور(چترال ایکسپریس) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے آرمی پبلک سکول پشاور کے دلخراش واقعہ کو ملکی تاریخ کا نہایت اندوہناک سانحہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ آرمی پبلک سکول کے طلباءاور اساتذہ کی شہادت ہمیشہ یاد رکھی جائے گی ۔ آرمی پبلک سکول کے معصوم بچوں نے اپنی جانوں کا نذرانہ دے کر ملک میں دیر پا امن کی بنیاد رکھی اور پوری قوم ،حکومت اور اداروں کو مشترکہ دشمن کے خلاف متحد کر دیا ۔ شہدائے اے پی ایس کا غم آج بھی ہمارے دلوں میں زندہ ہے اور ہمیشہ زندہ رہے گا۔ 16 دسمبر کو آرمی پبلک سکول پشاور کے دلخراش سانحہ کی ساتویں برسی کے موقع پر یہاں سے جاری اپنے ایک بیان میں وزیراعلیٰ نے کہاکہ آج کا دن ہمیں اس المیہ کی یاد دلاتا ہے جب انسانیت کے دشمنوں نے ننھے اور معصوم طالب علموں کو بے دردی سے قتل کیا۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اس المناک واقعہ کے بعد پوری قوم اور ادارے دہشت گردی کے ناسور کو معاشرے سے ختم کرنے کیلئے متحد ہوئے ، حکومتی ، سیاسی اور عسکری قیادت نے مل بیٹھ کر اتفاق رائے سے نیشنل ایکشن پلان بنایا جو پرامن پاکستان کی طرف درست اور بروقت اقدام ثابت ہوا۔ انہوں نے کہا کہ دنیا گواہ ہے کہ دہشت گردی کی اس جنگ میں قوم کے دیگر سپوتوں کی طرح ہمارے نونہالوں نے بھی جام شہادت نوش کرکے تاریخ رقم کی ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ 16 دسمبر کا دن متاثرہ والدین کیلئے نہایت کرب کا دن ہے کیونکہ اس دن ان کے جگرگوشے ہمیشہ کے لئے اُن سے جدا ہو گئے مگر اُنہوںنے قربانی کی ایک ایسی داستان رقم کی جو کبھی فراموش نہیں کی جا سکے گی ۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت شہدائے اے پی ایس کے خاندانوںکے عزم و حوصلے کو سلام پیش کرتی ہے جنہوں نے صبروتحمل اور استقامت کا پہاڑ بن کر اپنے جگر گوشوں کی جدائی برداشت کی ہے۔

َِِ<><><><ہینڈآوٹ نمبر664۔ پشاور 15 دسمبر 2021

*سانحہ اے پی ایس کی ساتویں برسی کے موقع پر وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان کا بیان*

 وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے آرمی پبلک سکول پشاور کے دلخراش واقعہ کو ملکی تاریخ کا نہایت اندوہناک سانحہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ آرمی پبلک سکول کے طلباءاور اساتذہ کی شہادت ہمیشہ یاد رکھی جائے گی ۔ آرمی پبلک سکول کے معصوم بچوں نے اپنی جانوں کا نذرانہ دے کر ملک میں دیر پا امن کی بنیاد رکھی اور پوری قوم ،حکومت اور اداروں کو مشترکہ دشمن کے خلاف متحد کر دیا ۔ شہدائے اے پی ایس کا غم آج بھی ہمارے دلوں میں زندہ ہے اور ہمیشہ زندہ رہے گا۔ 16 دسمبر کو آرمی پبلک سکول پشاور کے دلخراش سانحہ کی ساتویں برسی کے موقع پر یہاں سے جاری اپنے ایک بیان میں وزیراعلیٰ نے کہاکہ آج کا دن ہمیں اس المیہ کی یاد دلاتا ہے جب انسانیت کے دشمنوں نے ننھے اور معصوم طالب علموں کو بے دردی سے قتل کیا۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اس المناک واقعہ کے بعد پوری قوم اور ادارے دہشت گردی کے ناسور کو معاشرے سے ختم کرنے کیلئے متحد ہوئے ، حکومتی ، سیاسی اور عسکری قیادت نے مل بیٹھ کر اتفاق رائے سے نیشنل ایکشن پلان بنایا جو پرامن پاکستان کی طرف درست اور بروقت اقدام ثابت ہوا۔ انہوں نے کہا کہ دنیا گواہ ہے کہ دہشت گردی کی اس جنگ میں قوم کے دیگر سپوتوں کی طرح ہمارے نونہالوں نے بھی جام شہادت نوش کرکے تاریخ رقم کی ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ 16 دسمبر کا دن متاثرہ والدین کیلئے نہایت کرب کا دن ہے کیونکہ اس دن ان کے جگرگوشے ہمیشہ کے لئے اُن سے جدا ہو گئے مگر اُنہوںنے قربانی کی ایک ایسی داستان رقم کی جو کبھی فراموش نہیں کی جا سکے گی ۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت شہدائے اے پی ایس کے خاندانوںکے عزم و حوصلے کو سلام پیش کرتی ہے جنہوں نے صبروتحمل اور استقامت کا پہاڑ بن کر اپنے جگر گوشوں کی جدائی برداشت کی ہے۔

َِِ<><><><><>><>

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔