آغاخان ایجوکیشن سروس پاکستان کی تورکھومیں آغاخان ہائیرسیکنڈری اسکول کی جدید طرز کی عمارت کا سنگ بنیاد

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس) آغاخان ایجوکیشن سروس،پاکستان نےتورکھو میں آغاخان ہائیر سیکنڈری اسکول کی جدید طرز کی عمارت کا سنگ بنیاد رکھا ۔عمارت کی اس توسیع سے اسکول میں طلبہ کی مجموعی تعداد 500 سے بڑھ کر 800 ہو جائے گی اور ساتھ ہی ساتھ اسے ہائیر سیکنڈری اسکول کا درجہ بھی دیا جائے گا۔
19 ہزار سکوائر فٹ پر پھیلی ہوئی اس عمارت کو ’’گرین بلڈنگز ‘‘کے طرز پر ڈیزائن کیا گیا ہےجو کاربن فوٹ پرنٹ کو یقینی بنائے گا۔ اس عمارت میں، 13 کلاس رومز، 2 سائنس اور 1 کمپیوٹر لیب، لائبریری اور دوسری سہولیات تعمیر کی جائیں گی۔
تقریب میں صدر ،اسماعیلی کونسل برائے پاکستان حافظ شیر علی نے بطور مہمان خصوصی اور نائب صدر، آغاخان کونسل برائے پاکستان حسین تیجانی،نے بطور گیسٹ آف آنر شرکت کی۔ اس کے ساتھ تقریب میں اسماعیلی ریجنل کونسل اپر چترال کے صدر امیتاز عالم ، آغا خان ریجنل اور لوکل کونسلات کی دیگر قیادت، آغا خان ایجوکیشن سروس پاکستان کے سی ای او امتیاز مومن ، ہیڈ آف ایجوکیشن آئین شاہ ، جنرل منیجر ، اے کے ای ایس پی ،گلگت بلتستان اور چترال بریگیڈئر ریٹائرڈ خوش محمد، معتبراتِ علاقہ کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔
اس موقع پر مختصر خطاب کرتے ہوئے صدراسماعیلی کونسل برائے پاکستان حافظ شیر علی  نے کہا کہ تورکھو چترال میں جدید طرز تعمیر کا شاہکار آغا خان ہائیر سیکنڈری اسکول کی نئی عمارت کی تعمیر سے تعلیم تک رسائی کے ساتھ ساتھ معیار میں بھی اضافہ ہوگا ۔اُنہوں نے تعلیم کے میعار کو برقرار رکھنے اور طلبہ میں سیکھنے کے عمل کو بہتر بنانے کے لیے جدید سہولیات فراہم کرنے میں آغا خان ایجوکیشن سروس پاکستان کے کردار پر روشنی ڈالی۔قبل ازین جنرل منیجر، اے کے ای ایس پی،گلگت بلتستان اور چترال بریگیڈئر ریٹائرڈ خوش محمد نے کہا کہ اسکولوں میں توسیع علاقہ میں تعلیمی مواقع میں اضافہ کرے گی اور اطراف کے شہروں اور دیہاتوں میں رہنے والے ہونہار طلبہ کو اپنی بہترین صلاحیتوں کو استعمال کرنے اور اپنی قوم کی خدمت کرنے کے مواقع فراہم کریں گے۔تقریب سے صدر ہیڈ اف ایجوکیشن آئین شاہ اورسماجی کارکن سفیر احمد نے بھی خطاب کیا۔اس سے ایک روز قبل، آغا خان اسکول، بونی اور آغا خان اسکول، مستوج میں دو نئی جدید ترین عمارتوں کا سنگ بنیاد رکھا گیا۔ مشترکہ طور پر، چترال میں تین آغا خان اسکولوں کی توسیع سےطلبہ کی تعداد 1,500 سے زائد ہوگی ۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔