ایڈہاک ریلیف کو بنیادی تنخواہ میں ضم نہ کرنے کی صوبائی حکومت کے فیصلے کے خلاف (اگیگا) لویر چترال کے زیر اہتمام احتجاجی جلوس

چترال (چترال ایکسپریس) ایڈہاک ریلیف کو بنیادی تنخواہ میں ضم نہ کرنے کی صوبائی حکومت کے فیصلے کے خلاف آل گورنمنٹ ایمپلائز گرینڈ الائنس (اگیگا) لویر چترال کے زیر اہتمام ایک احتجاجی جلوس نکالا گیا جوکہ چترال پریس کلب میں احتجاجی مظاہر ے کے بعد اختتام پذیر ہوا جس سے اگیگا کے صدر امیر الملک، کالج ٹیچرز ایسوسی این کے صدر نوید اقبال، آل ٹیچرز ایسوسی ایشن کے نثار احمد، آل پرائمری ٹیچرز کے ضیاء الرحمن، یونین کونسل سیکرٹریز ایسوسی ایشن کے آفتاب عالم، آل کلاس فورکے محمد قاسم، کلاس فور ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کے الیاس احمد، آل پرامیڈیکس ضلع لویر چترال کے صدر جمال الدین، آل پرامیڈیکس ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال کے وقار احمد، پی ڈبلیوڈی لیبر یونین کے شکیل احمد اور دوسروں نے خطاب کیا۔ انہوں نے صوبائی حکومت کے فیصلے کو ظالمانہ اور ملازم کش قرار دیتے ہوئے اسے فوری طور پر واپس لینے کا مطالبہ کیا اور مطالبہ منظور نہ ہونے پر بنی گالہ میں دھرنا دینے اور پہیہ جام ہڑتال کرنے کی دھمکی دے دی۔ منگل کے روز صوبائی قیادت کی ہدایات کی روشنی میں تمام سرکاری ملازمین نے علامتی ہڑتال کیا۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔