وزیر اعظم کے معاون خصوصی انجینئر امیر مقام اور ایم این اے مولانا عبدالاکبر چترالی نےبجلی کے نئی فیڈر کا افتتاح کردیا

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس )وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے سیاسی امور انجینئر امیر مقام نے کہا ہے میاں نواز شریف کی پارٹی کسی علاقے کی ترقی پر توجہ یا قدرتی آفات میں فوری رسپانس کسی سیاسی لالچ میں نہیں بلکہ اپنی فرض منصبی سمجھ کر کرتی ہے اور چترال اس کا ایک مثال جہاں کوئی منتخب ممبر نہ ہونے کے باوجود اس صلع کو گزشتہ دور میں سب سے ذیادہ فنڈز ملی اور لواری ٹنل پراجیکٹ اور گولین گول پراجیکٹ پایہ تکمیل کو پہنچا دیے گئے۔

بدھ کے روز اپر چترال میں ریش  کے مقام پر سڑک کی دریائے چترال میں طغیانی سے کٹاؤ کے مقام پر عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ جب بھی چترال میں قدرتی آفات سے تباہی ہوئی تو ان کی مدد کو پہنچ گئے۔ انہوں نے متاثریں کو معاوضے کی ادائیگی کے لیے وفاقی حکومت کی طرف سے 50 فیصد رقم کی فراہمی اور فیڈرل فلڈ کمیشن کی طرف سے حفاظتی پشتے کی تعمیر کرنے کا اعلان کیا۔

 انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم شہباز شریف نے متاثریں کے مسائل کو حل کرنے اور واپڈا اور پیڈو کے درمیان بجلی کے تنازعہ کو حل کرنے کے لئے بھی احکامات دئے ہیں

 اس سے قبل انہوں نے چترال شہر کے قریب جوٹی لشٹ کے مقام پر ایم این اے مولانا عبدالاکبر چترالی کے ساتھ مل کربجلی کے نئی فیڈر کا افتتاحکیا جس سے بروز، ایون، شیشی کوہ سمیت کئی یونین کونسلوں کو نیشنل گرڈ سے بجلی فراہم ہوگی۔

 انہوں نے اپر چترال جاتے ہوئے بونی روڈ پر واقع نوری لشٹ میں بجلی کی بندش پر احتجاج کرنے والے عوام سے بھی خطاب کیا جہاں ایم این اے مولانا عبدالاکبر چترالی بھی موجود تھے۔

 امیر مقام نے بعدازاں سابق وزیر مملکت شہزادہ محی الدین کے وفات ہر ان کے صاحب زادے شہزادہ افتخارِ الدین سے تعزیت کی

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔