معروف سماجی و مذہبی شخصیت قاری فیض اللہ چترالی کا چترال کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا امدادی دورہ۔

چترال(چترال ایکسپریس)معروف سماجی و مذہبی شخصیت قاری فیض اللہ چترالی کا چترال کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا امدادی دورہ گزشتہ ایک ہفتے سے جاری ہے۔
خطیب شاہی مسجد مولانا خلیق الزمان کے مطابق قاری  فیض اللہ چترالی نے سیلاب سے سب سے زیادہ متاثرہ علاقہ بریپ کا پہلے مرحلے میں گزشتہ ہفتے دورہ کیا اس موقع پر ایم پی اے ہدایت الرحمن سمیت علاقے کے علماء کرام بھی ان کے ہمراہ تھے قاری فیض اللہ نے متاثرین میں راشن پیکچ تقسیم کئے اور سو بوری گندم کا اعلان کیا جس کی ترسیل کا عمل کچھ دنوں میں مکمل ہو گا دوسرے مرحلے میں تریچ کے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا اور وہاں سیلاب سے متاثرہ خاندان میں پچاس بوری گندم تقسیم کئے تیسرے مرحلے میں گزشتہ کل وادی گولین کے سیلاب زدگان کے پاس پہنچے اور ان سے ہمدردی کا اظہار کئے اور راشن پیکچ تقسیم کرنے کے علاوہ دو متاثرہ مساجد کی تعمیر میں بھی تعاون کی یقین دہانی کرائی اور وہ لوگ جن کے گھر سیلاب میں بہہ گئے ہیں ان کے مکانات کی تعمیر کے سلسلے میں جستی چادروں کا بھی وعدہ کیا اور چوتھے مرحلے میں آج دمیڑ اور شیشی کوہ کے متاثرہ علاقوں میں گئے اور سیلاب میں جانبحق افراد کو بیس ہزار روپے کیش کے علاوہ تمام متاثرہ تیس سے زائد خاندانوں میں راشن بھی پہنچانے کا بھی کہا جو کہ ایک دو روز میں تمام متاثرہ افراد کو ان کے گھر کی دہلیز پر مہیا کردیا جائے گا اس موقع پر ان کے ساتھ ⁹خطیب شاہی مسجد چترال مولانا خلیق الزمان سابق ایم پی اے مولانا عبد الرحمن اور مولانا میر بہادر سمیت علاقے کے دوسرے علماء کرام بھی موجود تھے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔