سیلاب متاثرین چترال میں مفتی محمد سلیم ربانی نے تقریبا 18 لاکھ کی امداد تقسیم کرچکے ہیں، نصرت الہی

چترال(چترال ایکسپریس)چترال معروف سیاسی کارکن نصرت الہی نے ایک بیان میں مفتی محمد سلیم ربانی راولپنڈی (گجرخان)کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی بے لوث محنت اور ذاتی کوششوں سے اب تک لوئر چترال کے سیلاب متاثر ین اور تعمیر مساجد کے ساتھ ساتھ دیگر مستحقین غرابا، بیواؤں اور یتیموں میں اٹھارہ لاکھ تک کے امدادی اشیاء جس میں کیش، خوراک اور دوسرے بنیادی انسانی ضروریات کی چیزیں شامل ہیں، تقسیم کرچکے ہیں۔ جو کہ انتہائی خوش آئند اقدام ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جس طرح مفتی صاحب نے لوئر چترال کے سیلاب متاثرین کی مدد اپنی ذاتی کوششوں سے کی ہے اسی طرح وہ اپر چترال کے سیلاب متاثرین کی مدد بھی کریں گے۔ جہاں لوئر چترال کے مقابلے میں کئی گنا زیادہ تباہی ہوئی ہے۔ نصرت الہی کا کہنا تھا کہ لوئر چترال میں اب تک تینوں کیلاش ویلیز، بمبوریت ، رمبور، بریر، گبور گرم چشمہ، گولین اور شیشی کوہ کے متاثرین کی ان کی ضروریات کو مدنظر رکھتے ہوئے مختلف قسم کی امدادی اشیاء اور جہاں جہاں ضرورت پڑی کیش کی صورت میں بھی مدد کی جاچکی ہے۔ ہم مفتی صاحب کی کوششوں کو سراہتے ہوئے یہ امید رکھتے ہیں کہ وہ آئندہ بھی امداد کے اس سلسلے میں چترال کے پسماندہ علاقے میں جاری رکھتے ہوئے انسانیت کی خدمت کا کام جاری رکھیں گے۔ ان کی بے لوث خدمت کے لئے ہم سیلاب متاثرین اور چترال کے عوام کی طرف سے ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔