تجار یونین چترال لوئیر کے نمائندہ وفد کی گورنر خیبرپختونخواہ حاجی غلام علی سے ملاقات میں چترال کے مسائل حل کرنے کے لئے کردار ادا کرنے کی گزارش

پشاور(چترال ایکسپریس)تجار یونین چترال لوئیر کے نمائندہ وفد نے سرتاج احمد خان کوارڈنیٹر ایف جی سی سی آئی خیبرپختونخواہ کی قیادت میں گورنر خیبرپختونخواہ حاجی غلام علی سے ملاقات کی۔وفد میں بشیر احمد صدر تجار یونین چترال،اظہراقبال جنرل سیکرٹری تجاریونین چترال،عزیز احمد کوارڈنیشن سیکرٹری اور جبران بشیر پر مشتمل تھی۔
وفد نے حاجی غلام علی کو گورنر بننے پر مبارکباد دی اور چترال کے مسائل حل کرنے کے لئے کردار ادا کرنے کی گزارش کی۔
حاجی غلام علی نے وفد سے کہا کہ چترال اُن کا اپنا ضلع ہے،چترال کی محرمیوں کو دور کرنے اور چترال کو معاشی ترقی پر گامزن کرنے کیلئے وہ اپنا کردار ادا کریں گے۔وفد نے گورنر سے مطالبہ کیا کہ پاک افغان بارڈر ارندو اورشاہ سدیم کے مقام کو دوطرفہ تجارت کیلئے کھولا جائے تاکہ علاقے میں معاشی سرگرمیاں تیز اور غربت کا خاتمہ ممکن ہو۔اس کے علاوہ چترال میں سیاحتی سرگرمیوں کے حوالے سے بھی اقدامات پرزور دیا گیا جس کے نتیجے میں نہ صرف ضلع چترال بلکہ پورے صوبے سے غربت کاخاتمہ ممکن ہے۔اس کے ساتھ ساتھ چترال یونیورسٹی کو فنڈز کی فراہمی اور بنیادی ضروریات کی فراہمی پر بھی زور دیا گیا۔
وفد نے چترال بازار میں لائٹنگ،سیکیورٹی کمیروں کی تنصیب،واٹر سپلائی سکیم،نکاسی آب کی فراہمی اور بائی پاس روڈ کیلئے بجلی کی فراہمی کیلئے فنڈزکی فراہمی کے لئے بھی مطالبہ کیا اور اس کے ساتھ ساتھ اپر چترال میں ریڈکراس کے دفتر کے قیام کی منظوری کے حوالے سے بھی درخواست کی گئی۔
گورنر خیبرپختونخواہ حاجی غلام علی نے وفد کو یقین دلایا کہ چترال کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کیے جائینگے۔
وفد نے گورنر خیبر پختونخواہ حاجی غلام علی کو چترالی چغہ اور ٹوپی پہنایا۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔