ڈی۔پی۔او لوئر چترال صلاح الدین کنڈی کی سربراہی میں مداکلشٹ میں کھلی کچہری کا انعقاد۔

چترال (چترال ایکسپریس)ڈی۔پی۔او لوئر چترال صلاح الدین کنڈی کی سربراہی میں علاقہ مداکلشٹ میں کھلی کچہری کا انعقاد کیا گیا۔

اس موقع پر ایس۔ڈی۔پی۔او سرکل دروش اقبال کریم ,ایس۔ایچ۔او تھانہ دروش ایس آئی حیدر حسین, پی اے ٹو ڈی۔پی۔او نور زمان بھی ان کے ہمراہ تھے۔

کھلی کچہری میں مشیران علاقہ جن میں سابق ناظم میر ہزار خان, ویلیج کونسل چیرمین سردار عالم, سابق ناظم سرفراز شاہ, ( ر) صوبیدار الطاف حسین, مشنری شیر عجب, سوشل ورکر نواز, مذہبی اسکالر منیر حسین, وی,سی چیرمین قیوم خان سابق ناظم زاہد حسین اور نوجوانوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔

علاقہ مشیران اور معززین نے ڈی۔پی۔او کو مداکلشٹ آمد پر خوش آمدید کہا اور علاقے کے مسائل سے ڈی۔پی۔او کو آگاہ کیا۔

ڈی۔پی۔او صلاح الدین کنڈی نے کھلی کچہری میں عوام سے اپنے خطاب میں کہا کہ مداکلشٹ ایک خوبصورت علاقہ ہے یہاں کے لوگ انتہائی مہذب اور مہمان نواز ہے یہاں پر سیاحت کو فروغ دینے کے لئے پولیس دیگر اداروں کے ساتھ مکمل تعاون کریں گی۔

ڈی۔پی او نے منشیات کے نقصانات اور تعلیم کے اہمیت کے بارے میں بھی گفتگو کی۔

انہوں نے کہا کہ مجھے یہ جان کر بہت ذیادہ خوشی ہوئی کہ یہاں کے نوجوانان اعلی تعلیم یافتہ ہے اور مختلف اداروں میں اعلی عہدوں پر فائز ہوکر ملک اور قوم کی خدمت کررہے ہیں جوکہ ناصرف علاقے بلکہ پورے چترال کے لئے فخر کی بات ہیں۔

ڈی۔پی۔او لوئر چترال نے کہا کہ نوجوانوں کو منشیات کی لعنت سے بچانے کے لئے منشیات فروشوں کے خلاف سخت کاروائیوں کا سلسلہ جاری ہے۔

عوامی تنازعات کے حل میں ڈسپیوٹ ریزولیشن کونسل کا کردار انتہائی اہم ہے اس سلسلے میں علاقہ دروش میں ڈی۔ار ۔سی کو مزید فعال بنایا گیا ہے ۔عوام معمولی تنازعات کو مشیران علاقہ کی موجودگی میں باہمی صلح اور اتفاق رائے سے حل کریں۔

علا عمائدین ناپنے علاقے میں مشکوک افراد پر کڑی نظر رکھیں اور کرایہ داروں کی رجسٹریشن میں پولیس کے ساتھ مکمل تعاون کریں تاکہ علاقے میں امن وامان کو برقرار رکھا جاسکے ۔

اس کے علاوہ ڈی۔پی۔او لوئر چترال نے معتبرات علاقہ کی طرف پولیس سے متعلق مسائل کے فوری حل کے بارے میں موقع پر احکامات جاری کئیں۔ دیگر مسائل کو متعلقہ اداروں کے سربراہان کے نوٹس میں لاکر جلد ان کو حل کیاجائے گا۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔