ڈی پی اوچترال اپر وقار احمد خان کا اُمیدواروں کے ساتھ انتخابات کے سیکورٹی کے حوالے سے میٹنگ :

اپرچترال (ذاکرمحمدزخمی)انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخوا اختر حیات خان، ریجنل پولیس افسر محمد علی خان کی واضح اور خصوصی احکامات کے پیش نظر آج مورخہ یکم فروری 2024 کوڈی،پی،او اپروقاراحمد خان نے اپنے دفتر میں حالیہ عام انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواراں قومی و صوبائی اسمبلی کے ساتھ سیکورٹی کے حوالے سے گفت و شنید کی اور مختلف امور پر غورو خوص کیا۔انہوں نے تمام شرکاء کو خوش آمدید کہا اور امیدواراں کو بتایاکہ جنرل انتخابات مورخہ 8فروری 2024 ء کو منعقد ہونا قرار پایا ہے۔ تمام امیدواران زیادہ سے زیادہ پروگرامات ،کارنرمیٹنگز ،عوامی اجتماعات میں دن رات لگے ہوئے ہونگے۔ لہٰذا ان کی سیکورٹی اور اجتماعات میں شریک جنرل پبلک کی سیکورٹی انتہائی اہم ہے۔ انہوں نےتمام امیدواران سے گذارش کی کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان کے جاری کردہ ایس او پیز اور ضابطہ اخلاق پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں اور کوشش کریں کہ ذیادہ پروگرامات دن کے وقت سر انجام پائیں اور ایسے علاقوں میں جانے سے گریز کریں جہاں وہ سمجھتے ہونگے رات کے وقت جانا مناسب نہیں ہے۔ اگر کوئی امیدوار سمجھتا ہے کہ وہ سیکورٹی کے بے غیر نہیں جانا چاہتا ہے تو اپنے لیے پرایئوٹ Authorized سیکورٹی کمپنی کا گارڈ رکھ سکتا ہے بشرطیکہ اسکے پاس لائیسنس یافتہ اسلحہ موجود ہواور اس کی گارڈ کی تفصیل ، ڈی،پی،او آفس کے ساتھ شئیر کریگا۔اسی طرح اگر کوئی امید وار پولیس کی سیکورٹی چاہتا ہو تو درخواست فورم یعنی DICCمیں جمع کریں اس پر غور و خوص ہوگا۔ جلد از جلد اسپر مناسب فیصلہ کیا جائے گا۔ میٹنگ کے آخر میں قومی اسمبلی کے آزاد امیدوارعبداللطیف اور صوبائی اسمبلی کے آزاد امیدوار ثریا بی بی نے پولیس سیکورٹی کے لیے درخواستیں جمع کی ہیں۔ اور دیگر امیدواراں/ نمائندے اپنی سیکورٹی کے حوالے سے اطمینان کا اظہار کیا۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔