خطیب خلیق الزمان کاجمعةالوداع میں تعلیمی اداروں میں داخلہ مہم پر بھرپورزور

چترال (چترال ایکسپریس)معاشرے کے اندر اچھائیوں کے حوالے سے آگاہی پھیلانے اور برائیوں کے خاتمے کے لئے منبر و محراب کا کلیدی کردار ہوتا ہے ۔ معاشرے کو درپیش مسائل کو اجاگر کرنا اور برننگ ایشوز کو ہائی لائٹ کرکے ان کاحل اسلامی تعلیمات کی روشنی میں پیش کرنا ایک بہترین خطیب کی نشانی ہوتی ہے۔
خطیب شاہی مسجد چترال مولانا خلیق الزمان کاکاخیل ہمیشہ جمعہ کی تقریر میں معاشرتی مسائل اور معاشرے کو پیش آمدہ مسائل کی نشاندہی کرتا ہے اور اسلامی تعلیمات کی روشنی میں ان کا حل اور اجتماع کو آگاہی دیتا ہے۔
آج کےجمعةالوداع میں خطاب کرتے ہوئے خطیب صاحب نے جہاں لیلة القدر اور رمضان کے آخری عشرے میں طریقہ رسول صلی اللہ علیہ وسلم پر بات کی وہاں تعلیمی اداروں میں نئے تعلیمی سال کے آغاز پر بات کی اور داخلہ مہم پر بھرپور زوردیا اور علم و تعلیم کی اہمیت پر قرآن وسنت کی روشنی میں سیر حاصل گفتگو کی۔ بچوں کی بہترین تعلیم کو معاشرے کی بہتری اور بھلائی کے لئے اکسیر قرار دیتے ہوئے روشن مستقبل کی نوید قرار دیا۔

اپنے بچوں کو بہتر سے بہترین اداروں میں تعلیم دینے پر زور دیا اور معاشرے کی بھلائی اور جہالت کے خاتمے کے لئے کردار ادا کرنے پر زور دیا اور سب سے خوبصورت ترین بات یوں کہی کہ اگر کسی کی سرپرستی میں کوئی بچہ نہیں ہے تو وہ معاشرے کے بے سہارا ، یتیم اور ضرورت مند بچوں کا دست و بازو بن کر ان کی تعلیمی کفالت پوری کرے اور معاشرے میں علم کا دیا جلاتا رہے۔
اللہ تعالیٰ ہم سب کو معاشرے کی بہتری کے لئے کردار ادا کرنے کی توفیق عطا فرمائے آمین

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔