چترال میں بارشوں سے متاثرہ روڈوں کو فوری طور پر بحال کیا جائے۔ سلیم خان

چترال (چترال ایکسپریس)سلیم خان سابق صوبائی وزیر و صوبائی نائب صدر پیپلز پارٹی خیبرپختونخوا نے ایک اخباری بیان میں کہاہے کہ چترال بونی روڈ، چترال بمبوریت روڈ، شیشی کوہ ویلی روڈ، گولین ویلی روڈ، چترال گرم چشمہ روڈ آج تک ہر قسم کے ٹریفک کیلئے بند ہے۔ جگہ جگہ بڑے بڑے پھتر گرنے اور لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے بند ہؤاہے۔ محکمہ سی اینڈ ڈبلیو اور NHA کی طرف سے روڈز کی صفائی کاکام نہ ہونے کے برابر ہے
جبکہ گرم چشمہ ارکاری، پرسان اور کریم آباد روڈ مکمل طور پر بند ہے ان ویلی روڈوں کی صفائی کا کام ابھی تک شروع ہی نہیں ہوا ہے۔ اطلاعات کے مطابق پورے سب تحصیل لٹکوہ میں سینکڑوں کی تعداد میں مکانات اور مویشی خانے گر کر تباہی کا منظر پیش کر رہے ہیں ابھی تک ان علاقوں میں نہ کوئی عوامی نمائندے جا چکے ہیں اور نہ ہی ضلعی انتظامیہ کی طرف کوئی ریلیف پہنچ چکا۔ متاثرین کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبور ہو چکے ہیں
سلیم خان نے صوبائی و مرکزی حکومت سے اپیل کیاکہ فوری طور پر سب سے پہلے چترال لویر اور اپر کے ویلی روڈز کو جنگی بنیادوں پر کام کرواکے کھول دیا جائے اور بذریعہ ہیلی کاپٹر متاثرین تک ٹینٹ ،خوراک اور ادویات پہنچایا جائے
انہوں نے کہا کہ مشکل کی اس گھڑی میں ہم چترال کے متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔