قدرتی آفات سے نمٹنے کے لئے تمام اداروں کو مشترکہ لائحہ عمل ترتیب دینا ہوگا،ولی محمد خان آرپی ایم اکاچترال

چترال (چترال ایکسپریس)آغا خان ایجنسی فار ہیبیٹاٹ کے زیر انتظام آج چترال کے ایک مقامی ہوٹل میں موسم گرما میں قدرتی آفات سے نمٹنے کے سلسلے میں ایک مشترکہ اجلاس کا انعقاد کیا گیا جس میں تمام لائن ڈیپارٹمنٹ کے نمائندوں جیسے ضلعی انتظامیہ، ڈسٹرکٹ ڈیزاسٹرمنیجمنٹ یونٹ، ریسکیو 1122، محکمہ موسمیات، محکمہ صحت، محکمہ زراعت، محکمہ لائیو اسٹاک، محکمہ تعلیم، پبلک ہیلتھ، آب پاشی، AKESP, AKHSP, AKRSP, AKRC اور ITREB کے نمائندوں نے شرکت کی۔ تقریب کے شرکاء نے اپنے اپنے اداروں کے موسم گرما کے سلسلے میں تیاریوں سے شرکاء کو آگاہ کیا جبکہ آغا خان ایجنسی فار ہیبیٹاٹ پاکستان چترال ریجن میں موسم گرما میں قدرتی آفات سے نمٹنے کے لئے اپنی تیاریوں سے تمام شرکاء کو آگاہ کیا۔اختتامی خطاب میں آر پی ایم ولی محمد خان نے تمام شرکاء کا اس اہم ترین ورکشاپ میں شرکت پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ قدرتی آفات سے نمٹنا اب کسی ایک ادارے کے بس میں نہیں رہا۔ ہمیں اس سلسلے میں باہمی اتفاق سے مشترکہ طور پر کوششوں کا آغاز کرنا چاہئے تاکہ ہم بروقت اور تمام متاثرین تک پہنچ سکیں اور ان کی مدد کرسکیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی شہروز مفتی اے اے سی چترال لوئر نے اپنے خطاب میں قدرتی آفات کے دوران بہترین خدمات انجام دینے پرAKAHP کی کوششوں کو خراج تحسین پیش کیا اور اس امید کا اظہار کیا کہ یہ سلسلہ آگے بھی جاری رہے گا۔انہوں نے تمام شرکاء کو ضلعی انتظامیہ کی طرف سے بھر پور تعاون کی یقین دہانی کرائی۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔