تازہ ترین

چترال میں ناروا لوڈشیڈنگ ،امیر مقام اور وزیراعظم کے لواری کراس کرتے ہی بجلی بھی ان کے ساتھ لواری پار چلی گئی۔سماجی وسیاسی حلقے چترال

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس)چترال کے سماجی اور سیاسی حلقوں نے واپڈا کی طرف سے عید کے موقع پر لوڈشیڈنگ ختم کرنے کے اعلان کو جھوٹ کا پلندہ قرار دیا ہے اور عوام سے کہا ہے کہ واپڈا کے اعلان پر کان نہ دھریں اپنے لالٹین،موم بتی اور بابوزی تیار رکھیں۔ایک اخباری بیان میں رہنما پاکستان پیپلز پارٹی و صدر چترال گول کمیونٹی ڈولپمنٹ اینڈ کنزرویشن کے صدر عالم زیب ایڈوکیٹ اور صدر ڈسٹرکٹ یوتھ فورم قاضی فیصل احمد سعید نے alamqaواپڈا حکام اور ضلعی انتظامیہ کی طرف سے عید سے10دن پہلے چترال کے بجلی گھر سے چترال ٹاون ،ہسپتال وغیرہ کو دی جانے والی بجلی منقطع کرنے کی طرف مبذول کرتے ہوئے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا ہے کہ وزیراعظم کے مشیر انجینئر امیر مقام نے5ستمبر سے7ستمبر تک تین دن چترال میں گذارا۔اس دوران نہ لوڈ شیڈنگ ہوئی نہ وولٹیج میں کمی آئی۔امیر مقام اور وزیراعظم کے لواری کراس کرتے ہی بجلی بھی ان کے ساتھ لواری پار چلی گئی۔اس کا مطلب یہ ہے کہ بجلی کی کوئی کمی نہیں ۔چترال کے عوام کی امن پسندی کی وجہ سے چترال کے عوام کو سزا اور اذیت دے کر ٹارچر کرتے ہیں۔اخباری بیان میں انہوں نے چترال کے عوام سے واپڈا کے خلاف راست قدم اُٹھانے کی اپیل کی ہے اور عوام کو یاد دلایا ہے کہ لاتوں کے بھوت باتوں سے نہیں مانتے۔چترال کے عوام سے عید کے موقع پر وزایر اعظم،انجینئر امیرمقام ،واپڈا کے چیئرمین اور وفاقی وزراء خواجہ محمدآصف ،عابد شیر علی کے خلاف بھرپور احتجاج کی اپیل کی ہے۔

Advertisements

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں

متعلقہ

اترك تعليقاً

زر الذهاب إلى الأعلى