لویر چترال میں انٹرسکولز سپورٹس فیسٹول کاپریڈ گراونڈ میں افتتاح

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس ) منگل کے روزلویر چترال میں پہلا انٹرسکولز سپورٹس فیسٹول پریڈ گراونڈ میں شروع ہوا جس کا افتتاح ڈپٹی کمشنر انوار الحق نے کی جبکہ ڈی ای او (مردانہ) محمودغزنوی اور حصہ لینے والے سکولوں کے پرنسپلز بھی موجود تھے۔ افتتاحی تقریب میں پبلک اور پرائیویٹ سکولوں کے طلباء کے طلباء چاق وچوبند دستوں کی شکل میں فارمیشن بنالی اور بعد میں کھیلوں کا باقاعدہ آعاز سے پہلے مارچ پاسٹ کیا۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں ڈی سی لویر چترال انوار الحق نے طالب علموں کو قوم کا مستقبل قرار دیتے ہوئے کہاکہ ان کی بہترین تربیت نصابی اور ہم نصابی اور سپورٹس کے سرگرمیوں میں کرنے کی ضرورت ہے اور ایسے ایونٹس کا انعقاد خوش آئند ہے۔ انہوں نے کہاکہ چترال میں ٹیلنٹ کی کوئی کمی نہیں ہے اور قوم کے نونہالوں کی صلاحیتوں کو ابھارنے کی اشد ضرورت ہے جن میں کھیل بھی شامل ہیں اور اس علاقے کے نوجوان قومی سطح پر بھی اپنے کو مختلف کھیلوں میں منواچکے ہیں۔ انہوں نے اس ایونٹ کی انعقاد پر محکمہ تعلیم کی کاوش کو سراہا اور ضلعی انتظامیہ کی طرف سے ہر ممکن تعاون اور مدد کی یقین دہانی کرائی۔ ڈسٹرکٹ ایجوکیشن افیسر محمود غزنوی نے بچوں کی تعلیم وتربیت میں کھیل کو لازمی قراردیتے ہوئے کہاکہ تندرست جسم کے لئے کھیل کو سب سے ذیادہ اہمیت کا حامل ہے اور اسی بات کے پیش نظرایلمنٹر ی اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ سکولوں کے درمیاں کھیلوں کے مقابلے منعقد کراتی ہے۔ انہوں نے ا س امیدکا اظہار کیاکہ پہلے کی طرح مختلف مقابلوں میں چترال کے اسٹوڈنٹس نہ صرف ڈویژن بلکہ صوبے کی لیول پر بھی چترال کا نام روشن کریں گے۔ انہوں نے ایونٹ کے منتظمین پرزور دیاکہ وہ ان کھیلوں میں حصہ لینے والے طلباء کو اپنا بچہ سمجھ لیں اور ان کی ہر ممکن حوصلہ افزائی کریں جبکہ طلباء کو چاہئیے کہ وہ اس ایونٹ کو اپنے لئے تربیت کا ایک ذریعہ سمجھ کر اس سے فائدہ اٹھائیں اور اپنے اندر لیڈرشپ کوالٹی پیدا کریں۔ اس موقع پر آل پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کے صدر وجیہہ الدین ، سپورٹس کمیٹی کے سیکرٹری اور گورنمنٹ ہائی سکول چترال کے وائس پرنسپل شاہد جلال ،ڈائریکٹر اسامہ شہید اکیڈمی فدا الرحمن اور احسان شہابی نے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ ایونٹ میں حصہ لینے والے سکولوں میں گورنمنٹ سینٹینل ماڈل سکول چترال، دی لینگ لینڈ سکول اینڈ کالج، گورنمنٹ ہائی سکول ہون، بلچ اور چمورکھون کے علاوہ الخدمت سکول قتیبہ کیمپس دنین اور سٹی کیمپس سبزی منڈی، آغا خان ہائر سیکنڈر ی سکول، چترال پبلک سکول، مسلم ماڈل سکول، ایف سی پی ایس، تریچ میر پبلک سکول، دی اقراء ماڈل سکول، فخر ملت پبلک سکول سینگور، چترال ماڈل کالج اور اے کیو خان سکول چترال کیمپس شامل تھے۔ اس موقع پر ڈپٹی ڈی ای او شاہد حسین اور اسسٹنٹ ایجوکیشن افیسر انعام اللہ، سینئر پی ای ٹی فاروق اعظم بھی موجود تھے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔