تازہ ترین

ایف آئی ایف کی طرف سے گرم چشمہ کے مقام پر متاثریں سیلاب میں امدادی سامان تقسیم

چترال(نمائندہ چترال ایکسپریس) جماعت الدعوۃ کے فلاح انسانیت فاؤنڈیشن نے چترال کے سیلاب متاثریں کے بحالی کا کام شروع کر دیا ہے۔اس سلسلے میں گزشتہ روز چترال کی تحصیل گرم چشمہ کے مقام پر متاثریں سیلاب میں گھروں کی تعمیر کے لئے جی آئی شیٹس ،گرم ملبوسات اور بسترے تقسیم کئے گئے اس موقع پر چئیر مین فلاح انسانیت فاؤنڈیشن حافظ عبد الرؤف،وائیس چئیر مین شاہد محمد،ڈاکٹر ظفرچیمہ،زونل انچارچ دیر زون ابو ہارون،کوارڈینیٹر ابوبکر محمد شفیق اور عامر بٹ موجود تھے۔حافظ عبد الرؤف نے گرم چشمہ کے 25متاثرہ خاندانوں کو مجموعی طور پر 125جستی چادریں،گرم ملبوسات اور بسترے فراہم کئے۔متاثریں کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے جماعت الدعوۃفیف کے چئیر مین حافظ عبد الرؤف نے کہا کہ قدرتی آفات اللہ تعالیٰ کی طرف سے ہیں اور یہ انسان کو توبہ اور رجوع الی اللہ کی طرف مائل کرتے ہیں جس کا ثبوت یہ ہے کہ قدرتی چشموں کی سرزمین چترال میں بسنے والے پانی کے گھونٹ گھونٹ کے لئے ترستے رہے۔ انہوں نے کہاکہ فلاح انسانیت فاونڈیشن نے اس آفات کے دوران اور اس کے بعد متاثریں اور مصیبت زدگان کی ہرممکن امداد جس کا مقصد کسی کو خوش کرنا یا کوئی اور مقصد ہرگز نہیں بلکہ رضائے الٰہی کا حصول ہے اور یہ مقصد پیش نظر تھاکہ ہمارے رضاکاروں نے اپنی جانوں کو ہتھیلی پر رکھ کر ضلعے کے گوشے گوشے میں ریلیف پہنچانے کا عظیم فریضہ سرانجام دیا۔ انہوں نے گرم چشمہ کے مقام پر ایک دینی مدرسے کے طالب علموں سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ دین سے دوری کی وجہ سے فلسطین سے کشمیر اور برما تک تکلیف میں مبتلا ہے اور جماعت الدعوۃ کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ یہ ان مصیبت زدہ مسلمان بھائیوں اور بہنوں کی مدد کو پہنچتا ہے۔بعدازان انہوں نے گرم چشمہ بشقیر کے مقام پر ایک جامع مسجد کی تعمیر کا افتتاح کرتے ہوئے اعلان کیا کہ مسجد کی تعمیر پر آنے والی پوری لاگت جماعت الدعوۃ برداشت کرے گی۔



اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
اظهر المزيد

مقالات ذات صلة

اترك تعليقاً

إغلاق