چترال سے اسلام آباد جانے والی پی آئی اے کے طیارے کی حادثے کی برسی منائی گئی

حادثے میں طیارے کے عملے سمیت 48افراد جان بحق ہوگئے تھے

چترال (نمائندہ چترال ایکسپریس) چترال سے اسلام آباد جانے والی پی آئی اے کے طیارے کی حادثے کی برسی منائی گئی جس میں طیارے کے عملے سمیت 48افراد جان بحق ہوگئے تھے جبکہ جوانسال ڈپٹی کمشنر اسامہ احمد وڑائچ اورپاپ سنگر سے مبلغ اسلام بننے والا جنید جمشید بھی ان میں شامل تھے۔ اس سلسلے کی سب سے بڑی تقریب اسامہ وڑائچ پارک میں منعقد ہوئی جس میں قائم مقام ڈپٹی کمشنر لویر چترال عرفان الدین نے پارک کے احاطے میں واقع طیارے کے حادثے میں جان بحق افراد کے لئے قائم یادگار شہداء پر پھول کے چادر چڑہائے اور فاتحہ خوانی کی۔ بعدازاں چترال پولیس اور چترال لیویز کے چاق وچوبند دستوں نے مار چ پاسٹ کیا اور یادگار شہداء کو سلامی دی۔ اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر چترال ڈاکٹر عاطف جالب، ڈسٹرکٹ ہیلتھ افیسر چترال ڈاکٹر فیاض رومی سمیت مختلف محکمہ جات کے افسران بھی موجود تھے۔ درین اثناء سات سال گزرنے کے باوجود اس فضائی حادثے کی یاد میں چترال کا فضا سوگوار رہا اور لوگ حادثے میں بچھڑنے والے اپنے پیاروں کو یاد کرتے رہے جبکہ کئی مساجد میں قرآن خوانی کا اہتمام بھی کیا گیا۔ حادثے میں گرم چشمہ سے تعلق رکھنے والے ایک ہی خاندان کے پانچ افراد بھی شامل تھے۔

اس خبر پر تبصرہ کریں۔ چترال ایکسپریس اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں
زر الذهاب إلى الأعلى
error: مغذرت: چترال ایکسپریس میں شائع کسی بھی مواد کو کاپی کرنا ممنوع ہے۔